شہ سرخیاں
بنیادی صفحہ / امتیاز علی شاکر / بیشک اللہ تعالیٰ دلوں کے بھیدجانتاہے

بیشک اللہ تعالیٰ دلوں کے بھیدجانتاہے

حکومت وقت کی جانب سے تحریک لبیک یارسول اللہ ﷺ پاکستان کے دھرنے پرممکنہ سختی کے متعلق سوال مرشِدسرکار،عظیم روحانی پیشواسید عرفان احمد شاہ المعروف نانگامست صاحب کی خدمت میں عرض کیاتوآپ نے فرمایا’’اللہ تعالیٰ نے قرآن مجید میں ارشاد فرمایا’’اے نبی میرے بندوں کوخبردیں کہ میں بہت درگزرکرنے والااوررحیم ہوں مگراس کے ساتھ میراعذاب بھی نہایت دردناک عذاب ہے(سورۃ الحجر49,50) ۔سورۃ المومن کے اندرارشادباری تعالیٰ ہے’’جس دن سب لوگ صاف ظاہر ہوں گے ، اللہ سے اُن کی کوئی چیزپوشیدہ نہ ہوگی۔ آج بادشاہت کس کیلئے ہے اللہ کیلئے ہے ، جواکیلاہے ، بہت دبدبے والاہے‘‘۔بیشک اللہ سبحان تعالیٰ اپنے بندوں پرنہایت مہربان اورشفیق ہے،بیشک رحیم وکریم رب جباراورقہار بھی ہے۔بیشک کائنات کے ذرے ذرے پراللہ رب العزت کی حکومت ہے ۔جب لوگ اللہ تعالیٰ کے محبوب ﷺ کی شان میں گستاخیاں کرتے ہیں اورپھراپنی غلطی پرڈٹ جاتے ہیں تو اُن پرزلزلے کی صورت میں تعالیٰ کاعذاب نازل ہوتاہے ۔دھرنادینے والے عاشقان رسول ﷺ کسی ذاتی مقصد کیلئے گھروں سے نہیں نکلے ۔وہ توپوری قوم کوپورے ملک کواللہ تعالیٰ کے عذاب سے بچانے کیلئے نکلے ہیں۔بیشک اللہ تعالیٰ دلوں کے بھیدجانتاہے ۔ مرشِد سرکار نے فرمایا’’آج دنیاوی عارضی حکومت کے نشے میں چورحکمران وہ نہیں دیکھ سکتے جواولیاء اللہ دیکھ رہے ہیں۔ہمیں اس وقت کاڈرہے جب حکومت عاشقان رسول اللہ ﷺ کیخلاف ایساسخت رویہ اختیارکرے جواللہ تعالیٰ اوررسول اللہ ﷺ کی نارضگی کاسبب بنے اورپھراللہ تعالیٰ کے حکم سے پہاڑاپنامنہ کھول کراسلام آبادکونگل لیں۔آپ نے فرمایاکہ ہم اللہ تعالیٰ کی عظیم بارگاہ میں دعاگوہیں کہ حکومت دانشمندی سے کام لے کرعاشقان رسول اللہ ﷺ کیخلاف کسی قسم کاسخت رویہ اختیارنہ کرے اورتمام معاملات پرامن طریقے سے حل ہوجائیں ۔قارئین محترم اس بات میں کوئی شک نہیں رہاکہ عاشقان رسول اللہ ﷺ جذبہ شہادت لئے فیض آباد کے مقام پرگزشتہ14دنوں سے اپنے نبی کریم ﷺ کی ختم نبوت ؐ پرحملہ آورہونے والوں کیخلاف دھرنا دیئے بیٹھے ہیں اورحکومت ان کے مطالبات تسلیم کرنے سے انکاری ہے۔یہ بھی حقیقت ہے کہ تحریک لبیک یارسول اللہ ﷺ کی قیادت کی جانب سے پیش کئے جانے والے تمام مطالبات کسی خاص طبقے تک محدودنہیں رہے بلکہ یہ مطالبات پوری اُمت محمدی ؐ کی آوازبن چکے ہیں۔تاریخ شاہد ہے کہ عاشقان رسول اللہ ﷺ نے اپنے نبی ﷺ کی ناموس و ختم نبوت ؐ پرجانیں قربان کرکے ہمیشہ ہمیشہ کیلئے کامیاب اور کامران زندگیاں پائیں۔شہیدان ناموس رسالت مآب ؐ ظاہری طورپرپردہ کرنے کے باوجود آج بھی زندہ ہیں اور قیامت تک زندہ رہیں گے۔محبت رسول اللہ ﷺ میں ایساسرورومستی ہے کہ عاشق اپنی جانیں قربان کرکے جو لذت محسوس کرتے ہیں اس کی دوسری کوئی مثال نہیں۔قارئین آج فیض آباد تاجدارختم نبوت دھرنے میں شریک نوجوان،محمد آصف رضاقادری عطاری کے ساتھ بات ہوئی آپ یقین کریں اتناپرسکون نوجوان کبھی نہیں دیکھاسناجتناآصف رضا کومحسوس کیا۔نوجوان نے بتایا’’6نومبرکوشروع ہونے والے تاجدارختم نبوتؐ لانگ مارچ سے دھرنے تک 14روزسے تحریک لبیک یارسول اللہ ﷺ پاکستان کی کال پرکاہنہ نو لاہورسے حاضر ہوں۔زندگی بھر کسی دینی و دنیاوی عمل میں اتناسکون و راحت نہیں ملاجتنادھرنے میں بیٹھ کررسول اللہ ﷺ کی ختم نبوت ؐ کے پہریداروں کاساتھ دے کرمیسر آیا۔دنیا جس کھانے کے پیچھے بھاگتی ہے دھرنے میں رسول اللہ ؐ کے غلاموں کاپیچھاکرتاپایا۔سردی اوربارش نے پریشان کرنے کی بجائے بہت مزیدار راحت بخشی۔جوسمجھتے ہیں دھرنے والے بے سروسامان ہیں ،پریشان ہیں اُن کوخبرہی نہیں کہ جن کی ناموس کیلئے دھرنے والے بیٹھے ہیں وہ مالک ہمارے ساتھ ہیں۔لوگوں نے دیکھانہیں کہ جمعۃ المبارک کے دن فیض آباد دھرنے کے مقام پر آسمان میں سفیدبادلوں نے میرے آقاﷺ کانام مبارک لکھ کراپنی حاضری پیش کی۔جس دن سے ہم گھر سے نکل کرحضورؐ کی ختم نبوت ؐ کے قافلے میں شامل ہیں اسی دن سے یزیدی حکمرانوں کے علاوہ نہ صرف انسانوں بلکہ رب العزت کی کائنات کی تمام مخلوقات کومہربان محسوس کیاہے۔آصف رضاکی بات سن کرمجھے مرشِد سرکارفرمان یادآگیاجوتاجدارختم نبوتؐ لانگ مارچ شروع ہونے سے قبل راقم اپنے کالم میں تحریرکرچکاہے ۔آصف رضاقادری بھائی کی باتیں ابھی جاری ہیں درمیان میں مرشِدسرکارکافرمان شامل کررہاہوں۔عظیم روحانی پیشوا،سید عرفان احمد شاہ المعروف نانگامست کے ساتھ مرکزی امیرتحریک لبیک یارسول اللہ ﷺ پاکستان قبلہ علامہ حافظ خادم حسین رضوی صاحب کے باربار فرشتوں کی مدد آنے کے بیان کے متعلق تفصیلی بات ہوئی ۔قبلہ سید عرفان احمد شاہ صاحب کافرمان ہے کہ علامہ حافظ خادم حسین رضوی صاحب ہمارے بزرگ ہیں انہوں نے جوکہابالکل سچ ہے۔تحریک لبیک یارسول اللہ ﷺ کے ہر پروگرام میں انسانوں کے ساتھ دیگرمخلوقات بھی شامل ہوتی ہیں۔راقم نے سوال اُٹھایاکہ اللہ تعالیٰ کے فرشتوں یادیگرمخلوقات کومیرے جیساعام انسان دیکھ یامحسوس کرسکتاہے؟ انہوں نے کامل یقین اورپروقارلہجے میں جواب دیاہاں بالکل دیکھ سکتاہے محسوس کرسکتاہے شرط یہ ہے کہ نیت آزمائش کی لے کرنہ آئے۔انہوں نے کہاکہ جواللہ تعالیٰ کی غیبی مدد دیکھنایامحسوس کرناچاہتاہے چھ نومبر کے مارچ میں خالصتااللہ تعالیٰ ،رسول اللہ ﷺ کی خوشنودی کی نیت سے شامل ہو۔اللہ تعالیٰ کے فضل سے چھ نومبرکو لاہورسے اسلام آبادکی طرف نکلنے والے ختم نبوتؐ مارچ میں فرشتے قافلوں کی صورت شامل ہوں گے اوردنیادیکھے گی کہ محمد عربی ﷺ کے غلام اپنے نبی کریم ﷺ کے ساتھ کس قدر محبت و وفاکرتے ہیں ۔جن راستوں سے مارچ گزرے گاوہ راستے ،اُن پرموجود شجر،پھول ،پودے،ہوامیں اڑتے پرندے ، اورزمین پررینگنے والی مخلوق سمیت تمام مخلوقات مارچ کااستقبال کریں گی ۔سید عرفان احمد شاہ صاحب کی سحرانگیزگفتگوسن کر ایسامحسوس ہواجیسے چھ نومبر کے ختم نبوت ؐ مارچ اوردھرنے پر رسول اللہ ﷺ کی نظر خاص ہوگی اورصرف فرشتے نہیں اولیاء اللہ کی جماعت بھی شامل ہوگی ۔ آج تادم تحریر لاہورداتاحضور کے قدموں میں حاضری کے ساتھ شروع ہونے والے تاجدارختم نبوت ؐ لانگ مارچ اور فیض آباد دھرنے کو14 دن گزرچکے ہیں۔الحمدللہ راقم کے مرشِد محترم ۔عظیم روحانی پیشواسیدعرفان احمد شاہ صاحب کافرمان سو فیصدسچ ثابت ہوچکاہے۔دھرنے میں موجودآصف رضاقادری بتارہے ہیں کہ دھرنے کے مقام پراللہ سبحان تعالیٰ کی بے شمارنعمتوں کانزول جاری و ساری ہے ہم نے جونعمتیں ساری زندگی دیکھی تک نہ تھی وہ بھی حضورﷺ کے صدقے دھرنے میں کھانانصیب ہوئیں۔راقم نے نوجوان کا جذبہ قارئین کی خدمت میں پیش کرنے کی نیت سے سوال کیا۔کیاآپ کوڈرنہیں لگتاکہ حکومت نے سخت آپریشن کردیاتوآپ کوچوٹ لگ سکتی ہے؟ نوجوان نے جواب دیاامتیازبھائی اب تودل کی تمناہے کہ حضورﷺ کی محبت میں جان قربان ہوجائے۔آپ ﷺ کی ختم نبوتؐ کے پہریداروں کے قافلے میں شامل ہوکرجولطف آیااُس کی کوئی مثال نہیں توحضورﷺ کی ختم نبوت ؐ کیلئے پیش کی جانے والی شہادت کاعالم کیا ہوگا‘‘راقم قربان جائے آج عاشقان رسول اللہ ﷺ کااپنے آقاﷺ کے ساتھ محبت کایہ عالم ہے تو14سوسال قبل جب 1200صحابہ کرام نے جنگ یمامہ کے اندرختم نبوت ﷺ پرپہرہ دیتے ہوئے جام شہادت نوش فرمایااُس وقت صحابہ کرام کاجذبہ کیاہوگا۔دورحاضرکے مردقلندر جناب قبلہ علامہ حافظ خادم حسین رضوی صاحب ،باباجی پیرمحمد افضل قادری سمیت تحریک لبیک یارسول اللہ ﷺ پاکستان کی پوری قیادت ،دھرنے میں اپنے عقیدت مندوں کے ساتھ قافلے کی صورت میں شامل ہوکربھرپورحمایت کااعلان کرنے والے اولیاء اللہ کے وارثان وگدی نشینوں اورفیض آباد کے مقام پرتاجدارختم نبوت ﷺدھرنے میں موجود تمام عاشقان رسول اللہ ﷺ کی خدمت میں لاکھوں ،کرروڑوں سلام جواپنے گھر،کا روبار،ماں باپ،بہن، بھائی اوربیوی بچے سب کچھ چھوڑکر رسول اللہ ﷺ کی ختم نبوت ﷺپرپہرہ دینے کیلئے اپنے جانیں ہتھیلی پررکھے ہمیں اللہ تعالیٰ کے عذاب سے بچانے کیلئے بیٹھے ہیں،سلام اُن ماؤں،اُن بہنو،ان بیویوں کوجنہوں نے اپنے گھرکے مردوں کودھرنے میں شریک ہونے کیلئے باخوشی دُعاؤں کے ساتھ رخصت کیا

error: Content is Protected!!