شہ سرخیاں
Home / علاقائی / پسند کی شادی کرنے پر چوہدریوں نے غریب خاندان کا جینا دو بھر کردیا

پسند کی شادی کرنے پر چوہدریوں نے غریب خاندان کا جینا دو بھر کردیا

حاصل پور﴿بیورو پاکستان﴾پسند کی شادی کرنے پر چوہدریوں نے غریب خاندان کا جینا دو بھر کردیا۔اہل خانہ کو گھر میںمحصور کردیا۔اہل خانہ اور جانوروں کو چارہ تک نہ مل سکا۔تین دن تک محصور رکھنے کے بعد صحافیوں کی ٹیم پہنچنے پر محاصرہ ختم ہو ا۔ چوہدریوں نے سیاسی طاقت کے بل بوتے پر مظلوم خاندان پر مقدمہ درج کروادیا۔تفصیل کے مطابق نواحی چک15 فوردواہ کے نوجوان محمد یٰسین شہزاد نے بستی بھاگو والہ کی 20 سالہ نازیہ پروین سے 27/12/2011 کو بہاولپور میں کورٹ میرج کی جسمیں دونوں خاندان نے شرکت کی۔ جس میں باہمی انکی باہمی رضا مندی شامل تھی۔ لیکن لڑکی کے ماموں اس شادی پر خوش نہ تھے۔ انہوں نے لڑکی کو اپنے لیجانے کی متعد بار کوشش کی۔تو لڑکی نے تھانہ سٹی حاصل پور کو اطلاع کر دی جس پر SHO تھانہ سٹی رانا علی اکبر نے لڑکی کو تھانہ سٹی میں لاکر علاقہ مجسٹریٹ کی عدالت میں پیش کیا۔ تو نازیہ پروین نے اپنے خاوند کے حق میں بیان دیا۔ جس پر اسے خاوند کے ہمراہ پولیس روانہ کروایا۔لیکن لڑکی کے ماموں نے اسے اپنی انا کا مسئلہ بنا لیا اور محمد رمضان،محمدیعقوب،طاہر علی،محمدجاوید،فوجی عبدالغفور اور چوہدری صابر وغیرہ نے غریب خاندان کو سکون سے نہ رہنے دیا۔لیکن لڑکی کو تین مرتبہ پنچایتی طور پر علاقہ کے زمیندار چوہدری محمد مشتاق کے ذریعے واپس کیا۔لیکن لڑکی اپنے خاوند کے ساتھ رہنے پر بضد تھی۔ بعد میںلڑکی کوبخشن کے نزدیک چک نمبر9 میں اس کے خالو محمد اسماعیل کے گھر رسیوں سے باندھ دیا۔ خالو کی بیٹی کو ترس آیا۔اس نے نزدیکی تھانہ کو فون کردیا۔جس پر پولیس نے لڑکی کو گھر سے برآمد کرکے علاقہ مجسٹریٹ کے سامنے پیش کیا۔ تو نازیہ پروین نے حالاے کے پیش نظر درا لامان زندگی گزارنے کو ترجیح دی۔جس پر اسے دارالامان بھاولنگر بھیج دیا۔ جس کے بعد چوہدریوں نے یٰسین شہزاد کے گھر کا گھیرئو کر لیاانکے موٹرسائیکل کلہاڑیوں سے پھاڑ دیئے ۔مال مویشی اور اہل خانہ بھوکے پیاسے پڑے رہے۔سیاسی اژرورسوخ کے ذریعے یٰسین شہزاد اور اس کے والد بھائی اور دادا پر فائرنگ کا جھوٹا مقدمہ درج کروادیاگیا۔تھانہ صدر میں یٰسین شہزاد،ماسٹر محمد اشرف ذوالقرنین۔محمد اکرم، محمد اجمل اور محمد فاضل پر زیر دفعہ324/149 148پ ت کے تحت FIR دے دی گئی۔ مقدمے میں گرفتاری کے ڈر سے گھر سے غائب ہو گئے۔عورتوں اور بچوں کا محاصرہ کر کے جینا دو بھر کر دیا۔ ہر رات ان کے دروازے پر فائرنگ کی جاتی رہی۔ مقامی پولیس سب کچھ علم ہونے کے باوجود سیاسی مجبوریوں کی وجہ سے مظلوموں کی مدد کو نہ پہنچ سکی۔ میڈیا کی ٹیم جب موقع پر پہنچی تو مقامی لوگوں نے مظلوم خاندان کی حمایت کرتے ہوئے کہا۔ کہ ابھی آپکے آنے پر محاصرہ کرنے وا لے لوگ بھاگ گئے۔ اب جانوروں کو خالی بھوسہ ڈال دیا گیا ہے۔ پسند کی شادی کرنے پر نازیہ پروین کے والد محمد سرور چوہدری نے شادی کی شرائط میں 3 لاکھ روپے کا چیک 5 مرلہ پلاٹ۔دو تولہ سونا  ۔2 لاکھ روپے حق مہر لکھوایا تھا۔ جسے لڑکے کے والد ماسٹر اشرف نے تسلیم کیا تھا۔ ماسٹر محمد اشرف اور اہل خانہ نے وزیر اعلی پنجاب۔ چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری۔ IG پنجاب۔DIG بہاولپور۔DPO بہاولپور سے مطالبہ کیا ہے ۔ انکے ساتھ ہونے والے ظلم کا نوٹس لیا جائے اور انصاف فراہم کیا جائے۔

x

Check Also

ملتان : زمین پر قبضے کیخلاف احتجاج، بزرگ جوڑے پر پولیس کا انسانیت سوزتشدد

ملتان (بیورو رپورٹ) پولیس نے احتجاج کرنے والے بزرگ جوڑے سے انسانیت ...

Connect!