شہ سرخیاں
Home / تازہ ترین / ہلیان بیدیاں کا پولیس چوکی کے سامنے ماسٹر یٰسین کے خلاف چار گھنٹے تک احتجاج
loading...
ہلیان بیدیاں کا پولیس چوکی کے سامنے ماسٹر یٰسین کے خلاف چار گھنٹے تک احتجاج

ہلیان بیدیاں کا پولیس چوکی کے سامنے ماسٹر یٰسین کے خلاف چار گھنٹے تک احتجاج

مصطفی آباد/للیانی(نامہ نگار) بچی کو فون کرنے کو کیوں کہا:اہلیان بیدیاں کا پولیس چوکی کے سامنے ماسٹر یٰسین کے خلاف چار گھنٹے تک احتجاج،ناصرہ میو، مسز مسعود احمد بھٹی کی مظاہرے میں شرکت، سکول ٹیچر کو نوکری سے ڈسمس کرنے کا مطالبہ، تفصیلات کے مطابق بیدیاں گرلز سکول میں تعینات ٹیچر کے خلاف اہلیان بیدیاں کا پولیس چوکی بیدیاں کے سامنے روڈ بلاک کرکے چار گھنٹے تک احتجاج، مظاہرین نے الزام لگایا ہے کہ سکول ٹیچر یٰسین کو غیر قانونی طور پر گرلز سکول میں تعینات کیا گیا ہے،اور بچیوں سے ٹیلی فونگ رابطہ رکھتا ہے، طاہر محمود نے درخواست دی کہ ماسٹر یٰسین ڈیڑھ ماہ سے بچیوں کے سکول میں پڑھانے آتا ہے ،26-10کو میری بیٹی کی کتاب پر اپنا موبائل نمبر لکھ کر دیا کہ مجھے فون کرنا انکار پر کہا کہ ایس ایم ایس کرنا، میری بیٹی نے اپنی کتاب پر لکھ نمبر کاٹ دیا اور مجھے آ کر بتایا، جس کے بعد میں نے معززین علاقہ کے ساتھ مل کر احتجاج کیا، انہوں نے الزام لگایا کہ شکایات بیان سے باہر ہیں ایسا لگتا ہے کہ یہ اس سے قبل بھی متعدد بچیوں سے ریپ کر چکا ہے، اور یہ با اثر لوگ غریبوں کو دبا لیتے ہیں، جب میں نے معززین یونین کونسل چھٹیانوالہ کو جمع کیا گیا تو احتجاج ریکارڈ کروایا گیا، ڈی ایس پی صدر سرکل مرزا عارف رشید نے مظاہرین کو یقین دلوایا میں آپ کے ساتھ مکمل انصاف ہو گا، جبکہ ماسٹر یٰسین کو پولیس نے گرفتار کرکے کاروائی شروع کر دی، جس پر مظاہرین منتشر ہو گئے،

Share Button
loading...
loading...

About aqeel khan

loading...
Scroll To Top