شہ سرخیاں
Home / تازہ ترین / اسلام آبادکی بند ش کیخلاف ملک بندکردیاگیا ۔محمدناصراقبال خان
loading...
اسلام آبادکی بند ش کیخلاف ملک بندکردیاگیا ۔محمدناصراقبال خان

اسلام آبادکی بند ش کیخلاف ملک بندکردیاگیا ۔محمدناصراقبال خان

لاہور(پریس ریلیز) ہیومن رائٹس موومنٹ کے مرکزی صدرمحمدناصراقبال خان ، چیف آرگنائزر میاں محمدسعیدکھوکھر ، سیکرٹری جنرل محمدرضاایڈووکیٹ ،سینئر نائب صدور ندیم اشرف،سلمان پرویز ،میاں زاہد لطیف ،مرکزی سیکرٹری اطلاعات نسیم الحق زاہدی،صدرمدینہ منورہ سرفرازخان نیازی ،صدرکراچی یونس میمن ،صدرپنجاب محمدیونس ملک،،صدرچنیوٹ راناشہزادٹیپو ،صدرفیصل آبادندیم مصطفی ،صدرٹیکسلا سردارمنیراختر اور صدر قصور میاں اویس علی نے کہا ہے کہ گرفتاریاں ماورائے آئین ہیں،اسیر کارکنان کوفوری رہاجبکہ ان کے پرامن احتجاج کاجمہوری اورآئینی حق تسلیم کیاجائے۔ کپتان عمران خان نے ایک شہربندکرناتھا مگرمنتقم مزاج حکمرانوں نے پوراملک بندکردیا۔حکمرانوں کاشرپسندوں پرنہیں صرف پرامن کارکنان پرزورچلتا ہے۔جوعناصر پاکستان کیخلاف ہرزہ سرائی میں ملوث تھے انہیں چندگھنٹوں بعد رہاکردیا گیا جبکہ کرپشن کیخلاف احتجاج کرنیوالے ضمیر کے قیدیوں کو گرفتارکرلیا گیا۔جمہوری ادوارمیں اس قسم کے آمرانہ ہتھکنڈے نہیں آزمائے جاتے ۔خواتین کارکنان پرتشدداورانہیں گھسیٹنا اسلامیت، انسانیت اورجمہوریت سے متصادم ہے ۔وہ ایک اجلاس سے خطاب کررہے تھے ۔محمدناصراقبال خان اورمیاں محمدسعیدکھوکھر نے مزید کہا کہ پرامن سیاسی کارکنان کیخلاف کریک ڈاؤن سے بدترین آمریت ایکسپوزہوگئی ۔اگرلاک ڈاؤن جائز نہیں تھا توکریک ڈاؤن کس طرح جائزہوسکتا ہے۔انہوں نے کہا کہ عمران خان کیخلاف متحدہونیوالے سیاستدان کالا باغ ڈیم کے حق میں کیوں متحد نہیں ہوتے ۔ حکمرانوں کاپاس پیسہ کہاں سے آیا یہ پوچھنا شہریوں کاحق ہے ۔انہوں نے کہا کہ اگرحضرت عمرفاروقؓ کے دورخلافت میں ایک عام شہری ان سے دوچادروں کے بارے میں پوچھ سکتا ہے توعہدحاضر کے مسلم حکمران کس کھیت کی مولی ہیں۔اگرحکمرانوں کے دل میں چورنہ ہوتاتویقیناوہ خودکواحتساب کیلئے ضرورپیش کرتے ۔انہوں نے کہا کہ سیاسی کارکنان کیخلاف کریک ڈاؤن سے پاناما کامعاملہ ختم نہیں ہوگا۔

Share Button
loading...
loading...

About aqeel khan

loading...
Scroll To Top
web stats