شہ سرخیاں
بنیادی صفحہ / پاکستان / عبدالستارایدھی کودنیا سے رخصت ہوئے2برس بیت گئے

عبدالستارایدھی کودنیا سے رخصت ہوئے2برس بیت گئے

کراچی (نمائندہ خصوصی)دکھی انسانیت کی خدمت کےجذبےسےسرشار عبدالستار ایدھی کودنیاسےرخصت ہوئے دو برس بیت گئے۔چھ دھائیوں تک انسانیت کی خدمت کرنیوالے ایدھی بیس ہزار بچوں کے سرپرست کے طور پر رجسٹرڈ تھے۔نصف صدی تک اپنی ہمسفر اہلیہ بلقیس کے ہمراہ دکھ درد کے ماروں غریبوں یتموں اور بے سہاروں کا سہارا بننے والے ایدھی لوگوں کو جینے طریقہ سکھا گئے۔عبدالستار ایدھی ایک اچھے انسان، اچھے شوہر اور اچھے باپ ۔ انہوں نے انتہائی سادگی سے اپنی زندگی سماجی خدمت میں گزاری اور کسی بھی لسانی اور مذہبی تفریق سے بالاتر ہو کر اپنے ہم وطنوں کی بے لوث خدمت کی ۔عبدالستار ایدھی 28 فروری 1928ء میں بھارت کی ریاست گجرات کے شہر بانٹوا میں پیدا ہوئے۔ انہوں نے11برس کی عمر میں اپنی ماں کی دیکھ بھال کا کام سنبھالا جو ذیابیطس میں مبتلا تھیں۔ صرف 5 ہزار روپے سے اپنے پہلے فلاحی مرکز ایدھی فاؤنڈیشن کی بنیاد ڈالی۔1973 ء میں جب کراچی شہر میں ایک پرانی رہائشی عمارت زمین بوس ہوئی تو ایدھی ایمبولینسیں اور ان کے رضا کار مدد کے لیے سب سے پہلے پہنچے۔ اس دن کے بعد سے آج تک ملک بھر میں کوئی بھی حادثہ ہو، ایدھی ایمبولینسیں مدد فراہم کرنے میں پیش پیش نظر آتی ہیں۔ ایدھی نے صرف ایمبولینس ہی نہیں بلکہ بھوکے افراد کے لیے بھیک مشن شروع کیا تو چند گھنٹوں میں کروڑ روپے جمع کیے۔ لاوارث بچوں کے سر پر دستِ شفقت رکھا اور بے سہارا خواتین اور بزرگوں کے لیے مراکز قائم کیے۔ تقریباﹰ ایک لاکھ بے گور کفن لاوارث لاشوں کی صرف کراچی میں عزت و احترام کے ساتھ تدفین کی۔اپنی سماجی خدمات میں بے مثال عبدالستار ایدھی 8 جولائی 2016ء میں گردوں کے عارضے میں مبتلا ہو کر 88 سال کی عمر میں انتقال کر گئے ۔ ان کی خدمات کے اعتراف میں انہیں مکمل سرکاری اعزاز کے ساتھ کراچی کے قریب ایدھی ویلیج میں سپرد خاک کیا گیا۔

error: Content is Protected!!