شہ سرخیاں
Home / تازہ ترین / سانگھڑ : سندھ ہائی کورٹ کی جانب سے سرکاری ملازمین پر صحافت کرنے پرپابندی

سانگھڑ : سندھ ہائی کورٹ کی جانب سے سرکاری ملازمین پر صحافت کرنے پرپابندی

سانگھڑ(بیورو رپورٹ) سندھ ہائی کورٹ کی جانب سے سرکاری ملازمین پر صحافت کرنے پرپابندی لگانے کے فیصلے کو سانگھڑ ضلع کی عوام نے خوش آئن قرار دیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق صوبہ سندھ میں ہزاروں محکمہ تعلیم، صحت و دیگر سرکاری محکموں کے ملازمین گزشتہ کئی سالوں سے سرکاری ڈیوٹی سرانجام دینے کے بجائے صحافت کے پیشے سے وابسطہ ہیں جن کی صحافت کو سندھ ہائی کورٹ نے غیرقانونی قرار دے کرسرکاری ملازمین کی صحافت کرنے پر پابندی عائد کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔سندھ ہائی کورٹ کے اس جراء ت مندانہ فیصلے کو پروفیسر مبارک علی سنجرانی سندھ میں محکمہ تعلیم کی بہتری کے لئے پہلی کرن قرار دیا ہے ان کا مذید کہنا تھا کہ سرکاری ملازمت کرنے والے صحافیوں کا پریس کارڈ کلاشنکوف کے برابر ہے جس سے سرکاری ملازمین اپنے غیر قانونی کام سرکاری افسران سے صحافتی کارڈ کی وجہ سے لیتے ہیں اور سرکاری اداروں میں کرپشن کو بے نقاب کرنے میں ناکام رہتے ہیں جبکہ محکمہ اطلاعات حکومت سندھ بھی غیر قانونی طور پر صحافت کرنے والے سرکاری ملازمین کے خلاف گذشتہ 70سالوں سے کسی بھی قسم کی قانونی چارہ جوئی کرنے میں مکمل طور پر ناکام رہا ہے بلکہ سرکاری ملازمین کو محکمہ اطلاعات سندھ نے غیرقانونی طور پر گزشتہ کئی سالوں سے ایکریڈیشن کارڈ جاری کررہا ہے۔ سانگھڑ پاکستان انٹرنیشنل ہیومین رائٹس آرگنائزیشن کے لیگل ایڈوائزر ایڈوکیٹ محمد قذافی کا کہنا تھا کہ سرکاری ملازمین کا صحافت کرنا ایک قومی جرم ہے کیوں کہ ان کے پاس سرکاری ملازمت کے دوران بہت سے سرکاری راز ہوتے ہیں جو کہ وہ غیرقانونی صحافت کرکے اپنے سرکاری پیشے اور صحافت سے بددیانتی کررہے ہیں اور ان سرکاری رازوں کو صحافت میں اپنا نام پیدا کرنے کے لئے پرنٹ و الیکٹرونک میڈیا کی ذینت بناتے ہیں دنیا کے کسی بھی ملک میں سرکاری ملازمین کی صحافت کرنے پر پابندی ہے لیکن پاکستان وہ واحد ملک ہے جہاں سرکاری ملازمین سرکاری امور انجا م دینے کے بجائے غیر قانونی طور پر صحافت کررہے ہیں اور ان کے اس غیر قانونی عمل کو روکنے میں محکمہ اطلاعات حکومت پاکستان اور سندھ بری طرح ناکام ہے ہم سندھ ہائی کورٹ کے سرکاری ملازمین پر غیر قانونی طور پر صحافت کرنے پر پابندی کے فیصلے کو سرہاتے ہیں ۔

x

Check Also

نامعلوم تیس سالہ نوجوان سول ہسپتال بھائی پھیرو میں کئی گھنٹے تڑپنے کے بعد چل بسا

بھائی پھیرو(نامہ نگار) نامعلوم تیس سالہ نوجوان سول ہسپتال بھائی پھیرو میں کئی ...

چنیوٹ : پٹرول کی قلت شدت اختیار کر گئی، پٹرول نایاب ہوگیا

چنیوٹ(بیورو رپورٹ)چنیوٹ میں بھی پٹرول کی قلت شدت اختیا ر کر گئی ...

چنیوٹ : اوباش نوجوان کی 5سالہ بچے کے ساتھ زیادتی

چنیوٹ(نامہ نگار) اوباش نوجوان کی 5سالہ بچے کے ساتھ زیا دتی تفصیلا ...

سرائے مغل: موٹرسائیکل سواروں اور رکشہ یونین نے ٹریفک پولیس کی رشوت خوری اور زیادتیوں کے خلاف احتجاجی ریلی نکالنے کی دھمکی

بھائی پھیرو(نامہ نگار)موٹرسائیکل سواروں اور رکشہ یونین نے ٹریفک پولیس کی رشوت ...

کردارکشی نہیں قائل کرناسیکھیں

دورقدیم سے دورجدید تک انسان عقل وشعور کی بہت ساری منزلیں طے ...