پاکستانتازہ ترین

آزاد کشمیر کے سینئر وزیر چودھری محمد یٰسین کی گورنر پنجاب چوہدری سرور سے ملاقات

chaudhry_muhammad_yaseenلاہور(نمائندہ خصوصی) آزاد کشمیر کے سینئر وزیر چودھری محمد یٰسین نے گورنر پنجاب چوہدری سرور سے ملاقات کی ہے، دوران ملاقات آزاد کشمیر کی تازہ ترین سیاسی صورتحال،لائن آف کنٹرول پر بھارتی در اندازی، مسئلہ کشمیر،ملک میں حالیہ سیلاب ،امدادی کارروائیوں اور دیگر سیاسی معاملات زیر بحث آئے اور آزاد کشمیر کی تعمیر و ترقی بارے تفصیلی تبادلہ خیال کیا۔ چودھری محمد یٰسین نے عید کے دوسرے روز گورنر لاہور پہنچے جہاں ملاقات قریبا ایک گھنٹہ جاری رہی جس میں آزاد کشمیر کی لائن آف کنٹرول پر بھارتی افواج کی طرف سے کی جانے والی فائرنگ، تازہ ترین سیاسی صورتحال، آزاد کشمیر کی تعمیر و ترقی کے بارے میں اہم امور اور حکومتی کارکردگی پر تفصیلی بات چیت ہوئی۔ سینئر وزیر آزاد کشمیر چودھری محمد یسٰین نے گورنر پنجاب کو آزاد کشمیر کی تازہ ترین سیاسی صورتحال اور جاری ترقیاتی منصوبوں سے بھی آگاہ کیا۔چوہدری محمد یٰسین نے کہا کہ ن لیگ قیادت نے عوامی مینڈیٹ کا احترام کر کہ نئی سیاسی روایت قائم کی ہے ۔حکومت پاکستان کو اب مسئلہ کشمیر حل کرنے کی جانب موثر اقدامات کرنے کی ضرورت ہے۔ اس موقع پرگورنر پنجاب چوہدری سرور نے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ آزاد کشمیر اور مقبوضہ کشمیر کی عوام کو تنہا نہیں چھوڑیں گے آزاد کشمیر میں جاری ترقیاتی منصوبوں میں حائل رکاوٹیں دور کرنے میں آزاد حکومت کی مدد کریں گے،کشمیر میں امن سے خطہ کا امن وابستہ ہے، لائن آف کنٹرول پر بھاری فورسز کی طرف سے بلا جواز فائرنگ سے کشمیری متاثر ہو رہے ہیں ،پاکستانی حکومت بھارت سمیت خطے کے دیگر ممالک سے دوستانہ تعلقات رکھنا چاہتی ہے تا کہ خطے میں امن قائم ہو اور پورا خطہ خوشحال ہو لیکن بھارتی افواج کی بلا جواز فائرنگ سے مسائل پیدا ہو رہے ہیں ۔مسئلہ کشمیر کا حل ہونا ضروری ہے اس کیلئے عالمی سطح پر گفتو شنید کی جانی چاہیے،گورنر پنجاب نے کہا کہ پاکستان مخالف قوتیں اس ملک کو آگے بڑھتا ہوا نہیں دیکھنا چاہتیں اور ملک میں حالیہ دہشت گردی کے واقعات بھی انہی کا شاخسانہ ہیں۔ انہوں نے کہا کہ دہشت گردی کے یہ واقعات ایسے وقت پر ہورہے ہیں جب ملک میں جمہوریت مضبوطی کی طرف رواں دواں ہے۔

یہ بھی پڑھیں  سبی:اقلیتی رکن قومی اسمبلی خلیل جارج فرانسس کو وفاقی کابینہ میں شامل کیا جائے، طارق مسیح

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker