پاکستانتازہ ترین

روزانہ ایک خودکشی:امریکی فوجیوں میں خودکشی کی شرح تیزی سے بلندہونے لگی

واشنگٹن ﴿نمائندہ خصوصی﴾امریکی فوجیوں میں خودکشی کی شرح تیزی سے بلند ہورہی ہے اور رواں برس یہ تعداد یومیہ ایک خودکشی تک پہنچ گئی ہے۔ ‘پینٹاگون’ کے اعداد و شمار کے حوالے سے اخبار’یوایس اے ٹوڈے’ میں شائع ہونے والی ایک رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ 2012 کے ابتدائی 155 دنوں میں 154 امریکی فوجیوں نے خود اپنے ہاتھوں اپنی زندگی کا خاتمہ کیا۔ خودکشیوں کی یہ تعداد رواں برس افغانستان میں ہلاک ہونے والے امریکی فوجیوں کی تعداد سے بھی 50 فی صد زیادہ ہے۔رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ امریکی فوجیوں میں خودکشی کی یہ بلند شرح ظاہر کرتی ہے کہ امریکی فوج عراق اور افغانستان کی جنگوں کا دباؤ محسوس کر رہی ہے۔ اس کے علاوہ فوج میں جنسی زیادتیوں، نشہ آور اشیا کے استعمال، گھریلو تشدد اور نامناسب رویے کی شکایات بھی بڑھ رہی ہیں۔رپورٹ کے مطابق 2010ئ اور 2011ئ میں فوج میں خودکشیوں کی شرح برابر رہی تھی لیکن رواں برس اس میں تیزی سے اضافہ تعجب خیز ہے جس کی وجوہات کا مکمل طور پر تعین نہیں ہوسکا ہے۔فوج کے اعداد و شمار سے ظاہر ہوتا ہے کہ ایسے فوجیوں میں خودکشی کا رجحان زیادہ پایا جاتا ہے جو ایک سے زائد بار میدانِ جنگ میں رہ چکے ہیں۔ لیکن ساتھ ہی ساتھ یہ امر بھی حیرت انگیز ہے کہ ایسے فوجی بھی بڑی تعداد میں خودکشی کر رہے ہیں جو سرے سے کبھی کسی جنگ کا حصہ ہی نہیں رہے

یہ بھی پڑھیں  اسلام آباد محفوظ ہے، دہشت گردی کا مقابلہ ناکے لگاکر نہیں کیا جاسکتا: چوہدری نثار

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker