پاکستانتازہ ترین

انتقامی سیاست کے بھیانک نتائج نکلیں گے، آصف علی زرداری

کراچی(مانیٹرنگ سیل)پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف زرداری نے پالیسی بیان جاری کرتے ہوئے کہاہے کہ نوازشریف نےانیس سونوے کی دہائی کی سیاست دوبارہ شروع کردی ہے جس کے بھیانک نتائج نکلیں گے۔ لندن سےجاری بیان میں آصف علی زرداری نےکہا ہے کہ وزیراعظم نوازشریف دہشتگردوں کے خلاف آپریشن متاثرکرنےکیلئےقوم کوتقسیم کررہے ہیں۔ انتخابات میں دھاندلی کے باوجود جمہوریت کی خاطر نتائج تسلیم کئے حالانکہ وہ انتخابات آراوز کے تھے۔ ٹریبونلز کے فیصلوں نے بھی ہماری بات کی تائید کردی ہےکہ مسلم لیگ(ن) کو انتخابات جیتنے کےلئے باہر سےمدد مل رہی تھی۔ گرفتاریوں اور چھاپوں کے بارے میں انہوں نے کہا کہ پہلےقاسم ضیا پھرسینیٹربنگش کےبیٹے اور اب ڈاکٹر عاصم کو گرفتار کیا گیا ہے۔ یوسف رضا گیلانی اورعلیل مخدوم امین فہیم کےوارنٹ جاری کئےگئے۔ سندھ کو وزیر اعظم کےاحکامات کےتحت مفلوج، بیوروکریٹس کونیب اورایف آئی اے کےذریعے ہراساں کیاجارہاہے۔ چیف سیکریٹری سندھ اوردیگر سیکریٹریز کاضمانتوں پرہوناانتقامی سیاست نہیں توکیا ہے۔ آصف زرداری نے کہا کہ رانامشہودکی میاں صاحبان کیلئےرقم لیتے ہوئے ویڈیو منظرعام پرآچکی ہے۔اس کے باوجود رانا مشہود کو گرفتار نہیں کیا گیا۔ سابق صدر نے کہا کہ ایسے وقت جب دشمن کی جانب سے شیلنگ اور فائرنگ کے ذریعے ہمارے لوگ اپنی جان کا نذرانہ پیش کر رہے ہیں اور پاک فوج دہشت گردوں کے خلاف  فیصلہ کن جنگ لڑ رہی ہے، ایسے میں نوازشریف حقیقی دشمن کو چیلنج کرنے کی بجائے  پیپلز پارٹی اور اپنے سیاسی مخالفین کو نشانہ بنا رہی ہے۔ انہوں نےکہا کہ حکومت کے اقدامات اس بات کی واضح نشاندہی کر رہے ہیں کہ حکومت قوم کو تقسیم کر رہی ہے اور اپنے فطری ساتھیوں طالبان اور دہشت گردوں کو دہشت گردی کے خلاف جنگ کو کمزور کرکے انہیں بچانے کی کوشش کر رہی ہے۔

یہ بھی پڑھیں  سیاچن:گیاری،شہید سپاہی محمد ظہیرسپرد خاک

آصف زرداری نے کہا کہ  پیپلز پارٹی پوری طرح سے دہشت گردی کے خلاف جاری جنگ میں فوج کے ساتھ کھڑی ہے اور اپنے جوانوں کو سلام پیش کرتی ہے جو اپنی جان کا نذرانہ پیش کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ایسا لگتا ہے کہ نواز شریف نے ماضی سے کوئی سبق نہیں سیکھا۔ ہم وہ لوگ نہیں جو معافی مانگ کر جدہ بھاگ جاتے ہیں۔ انہوں نے کہا وفاقی ایجنسیوں کی جانب سے سندھ میں کارروائیاں آئین کی کھلی خلاف ورزی ہیں۔ اگر یہ ایجنسیاں منصفانہ احتساب کرنا چاہتی ہے تو انہیں اس وفاقی وزیر کے خلاف سب سے پہلے کارروائی کرنی چاہیے جس کا مجسٹریٹ کے سامنے دیا گیا ایک اعترافی بیان موجود ہے کہ وہ شریف برادران کے لئے منی لانڈرنگ میں ملوث ہے۔ اس کے بعد ہی ہم یہ کہہ سکیں گے کہ مسلم لیگ(ن ) کے لوگ کتنے پاک صاف ہیں۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ ماڈل ٹاؤن میں ہونے والے قتل عام کے بارے جسٹس نجفی کی رپورٹ کو عوام کے سامنے لایا جائے۔ اصغر خان کیس میں ملوث سارے کرداروں کو بھی گرفتار کیا جائے۔

یہ بھی پڑھیں  اوکاڑہ :عدالت کے باہر ملزموں کی فائرنگ سے ایک شخص ہلاک دوشدید زخمی

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker