تازہ ترینکھیل

آئی سی سی کا محمد آصف اور سلمان بٹ پر یکم ستمبر سے پابندی ہٹانے کا اعلان

دبئی (مانیٹرنگ سیل) انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) نے اسپاٹ فکشنگ کیس میں سزا پانے والے پاکستانی کرکٹر محمد آصف اور سلمان بٹ پر  عائد پابندی ہٹانے کا اعلان کیا ہے، پابندی یکم ستمبر سے ہٹائی جائے گی۔ انٹرنیشنل کرکٹ کونسل کی جانب سے جاری بیان کے مطابق اسپاٹ فکسنگ کیس میں ملوث پاکستانی کرکٹر محمد آصف اور سلمان بٹ پر  عائد پابندیاں یکم ستمبر سے ختم ہو رہی ہیں، آئی سی سی کے مطابق آزاد اینٹی کرپشن یوںت کی جانب سے مقررہ شرائط   پوری ہونے کے بعد  دونوں کھلاڑی ڈومیسٹک اور انٹرنیشنل کرکٹ کھیلنے کے اہل ہوں گے۔  کرکٹ کی عالمی گورننگ باڈی  کی جانب سے کیے گئے  اعلان کے مطابق  تینوں کھلاڑیوں پر عائد پابندی یکم ستمبر دو ہزار پندرہ  کو رات بارہ  بجے ختم ہو جائے گی، تینوں کھلاڑی آئی سی سی اینٹی کرپشن ٹریبونل کے ضابطوں پر عمل درآمد کر کے  دو  ستمبر  دو ہزار پندرہ  سے ڈومیسٹک اور انٹرنیشنل کرکٹ کھیلنے کے اہل ہوں گے، تاہم محمد عامر کی جانب سے آئی سی سی سے تعاون کرنے اور لیکچرز میں حصہ لیئنے کی وجہ سے جنوری میں ان پر عائد پابندی میں نرمی کرتے ہوئے انہیں ڈومیسٹک کرکٹ کھیلنے کی اجازت دے دی گئی تھی۔ واضح رہے کہ سال  دو ہزار دس  میں لارڈز کے تاریخی میدان پر کھیلے گئے بدنام زمانہ ٹیسٹ میچ میں پیسوں کے بدلے  نوبال کرنے پر انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) نے پانچ فروری سال دو ہزار گیارہ  میں سلمان بٹ، محمد آصف اور محمد عامر پر کرکٹ کھیلنے پر پابندی عائد کی تھی، جس کے بعد  تینوں کھلاڑیوں پر جرم ثابت ہونے پر انہیں جیل بھیجنے کے ساتھ ساتھ سلمان بٹ کو  دس  سال، محمد آصف کو سات سال اور محمد عامر کو پانچ سال سزا سنائی گئی تھی۔ مائیکل بیلف کی زیر سربراہی پینل نے قطر میں چھ روزہ سماعت کے بعد عامر کو پانچ سال، آصف کو سات سال اور سلمان بٹ کو 10 سال پابندی کی سزا سنائی تھی۔ کھیل کے ضابطوں کی وجہ سے آصف اور سلمان بٹ کو زیادہ سے زیادہ پانچ سال سزا ہو سکتی تھی اور اسی لیے ان کی بقیہ سزا کو معطل کردیا گیا تھا
یہ بھی پڑھیں  چاپلوسی بند، آئی جی موٹر وے عہدے سے برطرف

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker