پاکستانتازہ ترین

لانگ مارچ کی بے موسمی اور بے سری بانسری بجانے والوں کے دماغ نے کام کرناچھوڑ دیا ہے۔محمدایازسومرو

ayaz soomroکراچی(نامہ نگار)وزیر قانون سندھ محمد ایاز سومرو نے کہا ہے کہ لانگ مارچ کی بے موسمی اور بے سری بانسری بجانے والوں کے دماغ نے کام کرنا چھوڑ دیا ہے۔ ان کے لانگ مارچ کے غبارے سے ہوانکل چکی ہے۔ کیونکہ ملک کے جمہوریت پسند عوام اور سول سوسائٹی نے ان کے اصل چہروں کو پہچان لیاہے۔ جن لوگوں نے بحالی جمہوریت کے لئے ملک پر جبری قبضہ کرنے والے کی ڈکٹیٹرس کا مقابلہ کرکے انہیں بھاگنے پر مجبور کیا۔ وہ جمہوری اداروں کے خلاف کسی ایرے غیرے نتھو خیرے کے کھیل کوکس طرح کامیاب ہونے دینگے ۔ اپنے جاری کردہ بیان میں ایاز سومرو نے کہا کہ قائد اعظم محمدعلی جناح ضلع ٹھٹھہ کے شہر جھرک میں پیدا ہوئے ۔ وہ سندھ کے اصلی باشندے ، سندھی اور بانی پاکستان ہیں۔ جس پر ہمیں فخر ہے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ سندھ ایک قدیمی ثقافتی اور تاریخی حیثیت رکھنے والی دھرتی ہے ۔ جس کے وارث شاہ لطیف ، سچل سرمست، سامی، لال شہباز قلندر اور کروڑوں سندھی ہوں اس کی وحدت کو کوئی بھی خطرہ نہیں ہوسکتا ہے۔ انہوں نے کہاکہ یہ صوفیوں ، درویشوں اور عظیم انسانوں کا دیس ہے ۔ جس کی حفاظت وہی کرینگے ۔ ایاز سومرو نے کہا کہ سندھ میں سندھی ، اردو ، سرائیکی ، تھری،ڈہاٹکی، بلوچی، پشتو، پنجابی ، کشمیری ، ہزاروی، ہندکوسمیت کئی زبانیں بولی جاتی ہیں اور تمام زبانوں سے ہمیں پیار ہے۔ کیونکہ زبانیں محبت اورپیار کے اظہار کا ذریعہ ہوتی ہیں۔ جبکہ سندھی سندھ کی قومی زبان ہے۔ جس پر ہمیں فخر ہے۔ سندھ میں رہنے والے تمام سندھی ہیں۔ خواہ وہ کوئی بھی زبان بولتے ہوں۔ اس میں زبان کوئی رکاوٹ نہیں بن سکتی۔ کیونکہ اصل مسئلہ جذبے اور دہرتی سے رشتے کا ہے۔ ایاز سومرو نے کہا کہ سندھ لوکل گورنمنٹ ایکٹ کوئی آسمانی صحفیہ نہیں ہے۔ جس میں تبدیلی یا ترمیم نہیں ہوسکتی۔ سندھ اسمبلی عوام کامنتخب اور معزز ایوان ہے۔ اگر اسمبلی چاہے تو نہ صرف اس ایکٹ میں ترمیم کرسکتی ہے۔ بلکہ نیا ایکٹ بھی منظور کرسکتی ہے ۔ اس سلسلے میں کسی کوبھی کوئی شک یا ابہام نہیں ہونا چاہیے۔

یہ بھی پڑھیں  رحیم یارخان:ناجائزتعلقات کے شبہ میں باپ اور بیٹے نے بیٹی کو موت کے گھاٹ اتاردیا

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker