پاکستانتازہ ترین

بدکار خاتون روازنہ مسجد جانے کی شرط پر رہا

پشاور (مانیٹرنگ سیل) پشاور ہائیکورٹ نے مبینہ طور پر جسم فروشی کا کاروبار کرنے والی خاتون کو اس شرط پر ضمانت پر رہا کردیا کہ وہ روزانہ ایک گھنٹہ مسجد میں مذہبی تعلیم حاصل کرے گی۔پولیس نے 6 ستمبر کو پشاور کے علاقے حیات آباد میں مبینہ بدکاری کے اڈے پر چھاپہ مار کر اس کی مالک نیلم اور دیگر 4 لڑکیوں کو گرفتار کرلیا تھا۔14 ستمبر کو ذیلی عدالت نے ملزمان کی ضمانت کی درخواست کردی تھی جس پر اسے پشاور ہائیکورٹ میں دائر کیا گیا۔پیر کو سماعت کے دوران چیف جسٹس پشاور ہائیکورٹ نے 4 خواتین کی درخواست قبول 50 ہزار جرمانہ عائد کیاجب کہ نیلم کی درخواست ضمانت مشروط طور پر منظور کی گئی۔عدالت نے حکم دیا کہ نیلم حیات آباد کی زرغنی مسجد میں ایک ماہ تک روزانہ جاکر اپنے گناہوں کی تلافی کرنے کی کوشش کرے گی۔چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ کچھ عرصہ قبل تک پیشہ ورانہ تربیت کی وجہ سے خواتین کے لیے روزگار کے مواقع موجود تھے تاہم اب اس قسم کی سہولت نہ ہونے کی وجہ سے ضرورت مند خواتین غیر قانونی کاموں میں ملوث ہو جاتی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں  کراچی کنگز نے دفاعی چیمپئن اسلام آباد یونائیٹڈ کو 44 رنز سے شکست دے دی

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker