تازہ ترینعلاقائی

بدین:مقامی پولیس بھاری بھتہ وصول کر کے آکڑا پرچی اور کمیٹیوں کی کھلی چھوٹ

بدین﴿نامہ نگار﴾ بدین ضلع سمیت ماتلی،ٹنڈوباگو،گولارچی،تلہار،ٹنڈوغلام علی،کڈھن و دیگر چھوٹے بڑے شہروں میں اکڑا پرچی اور کمیٹیوں کی بھرمار سینکڑوں خاندان کنگال ہوکر رہ گئے مقامی پولیس بھاری بھتہ وصول کر کے آکڑا پرچی اور کمیٹیوں کی کھلی چھوٹ دی ہوئی ہے،اگر کوئی پولیس کو بھتہ نہیں دیتے ان کے خلاف چھاپوں کا سلسلہ شروع کر کے انکو گرفتار کر کے جیلوں میں ڈالا جاتا ہے اس سلسلہ میں رابطہ کرنے پر بدین ضلع کی سماجی شخصیت اور پاسبان ضلع بدین کے رہنمائ محمد علی جمالی نے بتایا کے بدین ضلع بھر میں پولیس کی سرپرستی میں اکڑا پرچی ،کمیٹیاں،گھٹکا ،مین پوری ،2100 ،کچا شراب،بھنگ،سمیت دیگر کاروبار چل رہا ہے، جس کی وجہ سے پولیس کو ماہوار لاکھوں روپے رشوت ملتی ہے،کھلے عام چلنے والی اس گندکاروبار کی وجہ سے سینکڑون نوجوانوں کی زندگیاں تباہ ہو رہی ہیں ، اور سینکڑوں خاندان کنگال ہو کر بھوک و افلاس کی زندگیاں گزارنے پر مجبور ہیں ، اور دوسری طرف نشہ، کمیٹیوں اور اکڑا پرچی کی پیسہ پورے کرنے کے لئے نوجوان چوریاں کرنے پر مجبور ہیں۔جس کی وجہ سے ضلع بھر میں بدامنی کا راج بھڑ رہا ہے ، اور نشہ فروخت کرنے والوں نے گھٹکے ،مین پوری،سمیت دیگر مضر صحت اشیائ کی قیمتوں میں زبردست اضافہ کر دیا ہے،رابطہ کرنے پر ایک منشیات فروش نے بتایا کے ہم نے نشے کی قیمتوں میں اس لئے اضافہ کیا ہے کے پولیس نے اپنی ماہوار منتھلی بھی بڑہا دی ہے،اس لئے 3 روپے والا گھٹکا6 روپے میں،5 روپے والی21 سو 12 روپے میں، 5 روپے والی مین پوری 10  روپے میں کر دی ہے،اب ہم تو ان کو زبردستی گھٹکا ، مین پوری، 2100 تو نہیں دیتے وہ خود مہنگے داموں خریدنے پر تیار ہیں ،رابطہ کرنے پر ایک منشیات استعمال کرنے والے نوجوان نے اپنا نام ظاہر نہ ہونے کی شرط پر بتایا کے بدین ضلع بھر میں پولیس کی سرپرستی میں برائی چھوٹ پر چل رہی ہے ، ضلع بھر میں اکڑاپرچی، جوا،کاروں ، موٹر سائیکلوں، عمرہ کے ٹکٹ کا بھانہ دیکر عوام کو دونوں ہاتھوں سے لوٹا جا رہا ہے،ضلع بھر کی عوام لالچ میں کنگال ہوتی جا رہی ہے،تو دوسرے طرف نوجوان گھٹکا ، مین پوری ، 21 سو سمیت کچے شراب کے عادی بن چکے ہیں ،مگر ہماری پولیس کاروائی کرنے کے بجائے ان کی حفاظتوں پر تعنیات ہے،ماہوار لاکھوں روپے بھتہ وصول کرنے میں مصروف ہیں ،جب کے سیکڑوں خاندان تباہ ہو کر فاکہ کشی کی نوبت تک پہنچ چکے ہیں ، ہزاروں نوجوان مضر صحت، گھٹکا،مین پوری، کچا شراب سمیت دیگر اشیائ کے عادی بن چکے ہیں،بدین ضلع کی سیاسی ،سماجی اور مذہبی تنظیمون کے رہنمائوں نے چیف جسٹس سپریم کورٹ افتخار محمد چوہدری ، آئی جی سندہ دیگر اعلیٰ حکام سے بدین ضلع میں بھڑتی ہوئی جو ا اور منشیات فروشی کا ازخود نوٹس لیکر اس گندے کاروبار میں ملوث پولیس اہلکاروں کے خلاف سخت قانونی کاروائی کی جائے۔

یہ بھی پڑھیں  جہلم : سول ہسپتال کے ملازمین تنخواہیں نہ ملنے سے بچوں سمیت فاقہ کشی پر مجبور

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker