تازہ ترینعلاقائی

بدین:منتخب نمائندوں کی عدم توجگی کےباعث سینکڑوں طلبہ کی زندگیاں خطرے میں پڑگئی

بدین(نامہ نگار)  محکمہ تعلیم اور بدین ضلع سے منتخب نمائندوں کی عدم توجگی کے باعث سینکڑوں طلبہ و طالبات کی زندگیاں خطرے میں پڑ گئی ہیں کسی بھی وقت کوئی نا خوشگوار واقعہ پیش آنے کا اندیشہ ہے،گورمنٹ ماروی گرلز کالج بدین سمیت ضلع کے درجنوں اسکولوں کی عمارتیں خستہ حالی کی شکار ہیں کالج اور اسکولوں کی تعمیرات کو کئی سال گزر چکے ہیں لیکن کالج اور اسکول کی عمارتوں کی مرمت اور دیکھ بال نہ ہونے کے باعث ان کی چھتیں انتہائی کمزورہو چکی ہیں آئے دنوں چھتوں کے چپڑے گرتے رہتے ہیں جس سے کئی طلبہ و طالبات زخمی بھی ہو چکے ہیں،جس کی مثال 5 دن پہلے ماروی گرلز کالج میں تدریسی عمل کے دوران کلاس روم کی چھتوں کے چپڑے گرنے سے تین طالبات زخمی ہو گئیں تھیں،کالج کی گذشتہ کئی سالوں سے خستہ حالی وقت بہ وقت چھتوں کے چپڑے گرنے کی شکایات کے باوجودمحکمہ تعلیم اور بدین سے منتخب نمائندوں کی بے حسی  سے تنگ آکر گرلز کالج کی طالبات نے شدید احتجاج کر کے ڈی سی ہائوس کے سامنے دھرنا بھی دیا لیکن اس کا بھی کوئی نوٹس نہیں لیا گیا بدین میں ہر سال پڑنے والی شدید بارشوں سے کالجز اور اسکولوں کی چھتوں پر بارش کا پانی جمع ہونے سے چھتوں سے پانی ٹپکتہ رہتا ہے جس کے باعث چھتیں مزید کمزور ہو چکی ہیں کئی سالوں سے حکومت سندھ کی جانب سےکالج اور اسکولوں کی مرمت اور دیکھ بال کے لئے ہر سال کروڑ ہ روپے  کافنڈز محکمہ ایجوکیشن ورکس کو جاری ہو تے ہیں لیکن اس فنڈ سے محکمہ افسران اور سیاسی ٹھیکیداروں کے گھروں کی چھتیں تو تعمیر ہو تی ہیں لیکن کالجز اور اسکولز کی چھتوں کی تعمیر و مرمت نہ ہو سکی ہے جس کی وجہ سے سینکڑوں طلبہ و طالبات کی زندگیاں دائو پر لگی ہوئی ہیں اور کسی بھی وقت کوئی نا خوشگوار وقعہ پیش آنے کا اندیشہ ہے جس سے بچنے کے لئے کئی والدین نے اپنے بچوں کو اسکول اور کالجز جانے سے روک لیا ہے ، محکمہ تعلیم  اورمنتخب نمائندوں کی عدم توجگی  اور اسکول اور کالجز کی خستہ حالی کے باعث بدین کے تعلیمی اداروں میں تدریسی عمل بھی بدحالی کی طرف جا رہا ہے ۔

یہ بھی پڑھیں  بدین اوراس کے مضافاتی علاقون مین تیز طوفانی ہواؤن نے تباہی مچا دی

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker