تازہ ترینعلاقائی

بہاولنگر:خبرہے کہ کرپشن کا بے تا ج باد شاہ نکا تھا نیدار

بہاولنگر(نامہ نگار) کر پشن کا بے تا ج باد شاہ نکا تھا نیدار طاہر جوئیہ کر پشن ثا بت ہو نے کے با وجودریڈر ڈی ایس پی ٹریفک بہاولنگر تعینات ۔موصوف نے لائسنس برانچ میں وزیر اعلیٰ پنجاب گرین کار سکیم کے دوران بوگس ڈرائیونگ لائسنس جاری کر کے لاکھوں روپے کمائے تفصیلات کے مطا بق ایڈیشنل آئی جی ٹریفک پنجاب کے حکم پر رانا محمد اسلم ڈی ایس پی نے بہاولنگر آ کر تمام ریکارڈ قبضہ میں لے کر مو صوف کومعطل کرکے لاہوررپورٹ کرنے کے احکامات جاری کیے تھے اس کے سا تھ ایس پی ٹریفک بہاولپور اورسابق ڈی ایس پی ٹریفک بہاولنگربھی معطل ہوئے تھے جو کہ آج تک معطل ہیں لیکن ایس آئی طاہرجوئیہ کر پشن کے باوجوددوبارہ بہاولنگرکے اسی دفترمیں اہم پو سٹ پر تعینات ہو گیا ہے ۔نکا تھانیدار اایک گوالے کا بیٹا ہے وراثت سے بہت تھوڑی زمین حصہ میں آئی ہے لیکن با وثوق ذرائع کے مطابق اس وقت 20ایکڑ سے زائدزرعی زمین کا مالک ہے جسکی مالیت کروڑوں روپے بنتی ہے جبکہ شہرمیں 4عدد عالیشان کوٹھیاں بھی موصوف کی ملکیت ہیں جن کی مالیت تقریبا5کروڑ روپے بنتی ہے۔جن میں سے ایک پاسپو رٹ آفس اور بقیہ تین کو ٹھیاں بھاری کرا یہ پر دی ہوئی ہیں پاسپورٹ دفتر کیساتھ ملحقہ دوکا نیں بھی طاہرجوئیہ کی ملکیت ہیں جوپاسپورٹ آفس کے ایجنٹس کو کرایہ پر دی ہو ئی ہیں مو صوف کے بچے لاہورکے اعلی ٰ سکو لوں میں زیر تعلیم اور لاہور میں ہی رہائش پذ یر ہیں ۔مو صوف تھانیدار نے لائسنس برا نچ کا انچارج ہو تے ہوئے وزیر اعلیٰ پنجاب گرین کار سکیم کے دوران بوگس ڈرائیونگ لائسنس جاری کر کے لاکھوں روپے کمائے ۔ریڈر ٹریفک طاہرجوئیہ کا رویہ اپنے اہلکاروں کے ساتھ ہتک آمیز ہے ۔اعلیٰ افسران سے اس کرپٹ اے ایس آئی کو معطل کر کے اس کے خلاف قانو نی کار وائی کا مطا لبہ کیا جاتا ہے ۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button
error: Content is Protected!!