پاکستانتازہ ترین

اسلم رئیسانی پراعتماد کی قرارداد متفقہ طور پرمنظور

کوئٹہ(ڈیسک رپورٹر) بلوچستان اسمبلی میں وزیراعلیٰ اسلم رئیسانی پر اعتماد کی قرارداد متفقہ طور پر منظور کرلی ہے ۔ اسلم رئیسانی کہتے ہیں کہ اراکین اسمبلی نے ان کی حکومت پر شب خون مارنے کی کوشش ناکام بنا دی ہے ۔ بلوچستان اسمبلی کا اجلاس قائم مقام اسپیکر مطیع اللہ آغا کی صدارت میں ہواجس میں پینسٹھ اراکین میں سے پینالیس شریک ہوئے۔ صوبائی وزیر سید احسان شاہ نے وزیراعلیٰ پر اعتماد کی قرارداد پیش کی جو متفقہ طور پر منظور کر لی گئی ۔ اسلم رئیسانی نے اجلاس کو تاریخی قرار دیا اور کہا کہ ان کی حکومت پر شب خون مارنے کی کوشش ناکام ہو گئی ہے ۔ انہوں نے ارکان کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ وہ اقتدار میں رہیں یا نہیں ایک خاندان کی طرح سب اکٹھے ہیں ۔ ایک سوال پروزیراعلیٰ کا کہنا تھا کہ اسپیکر کے خلاف عدم اعتماد کا فیصلہ تاحال نہیں ہوا ۔ اسمبلی نے اسلم رئیسانی پر اعتماد کا اظہار کردیا ہے تاہم پیپلزپارٹی بلوچستان ان کی حمایت اور مخالفت میں تقسیم نظر آتی ہے ۔ پیپلزپارٹی کے صوبائی صدر صادق عمرانی کی صدارت میں صوبائی کونسل کا اجلاس ہوا جس میں مشترکہ قرارداد کے ذریعے صوبائی حکومت کو غیر آئینی قرار دیا گیا۔ دوسری طرف بلوچستان اسمبلی میں ڈپٹی پارلیمانی لیڈر علی مدد جتک کھل کر وزیراعلیٰ کے حق میں سامنے آگئے اور انہوں نے صادق عمرانی کو کرپٹ قرار دیتے ہوئے صدر ماننے سے ہی انکار کردیا ۔ موجودہ صورتحال میں وزیراعلیٰ بلوچستان اسلم رئیسانی اور پیپلزپارٹی بلوچستان کے صدر صادق عمرانی آمنے سامنے کھڑے نظر آرہے ہیں ۔ اسپیکر اسلم بھوتانی اور گورنر ذوالفقار مگسی اسلم رئیسانی کے ساتھ کھڑے تاہم ڈپٹی اسپیکر سمیت کئی ارکان اسمبلی صادق عمرانی کی حمایت کررہے ہیں

یہ بھی پڑھیں  لاہور:گندم کی قیمت میں 150روپے فی من اضافہ قابل ستائش ہے،کسان بورڈ پاکستان

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker