شہ سرخیاں
بنیادی صفحہ / پاکستان / قرضہ خوروں اورسرکاری خزانہ لوٹنے والوں کو نہیں چھوڑوں گا۔عمران خان

قرضہ خوروں اورسرکاری خزانہ لوٹنے والوں کو نہیں چھوڑوں گا۔عمران خان

بھائی پھیرو(نامہ نگار)رانا برادران کے با اثر قبضہ گروپوں سے واگزار کرائی اربوں روپے کی پچیس سو ایکڑ ازمین پر وزیر اعظم عمران خاں کا ہیڈ بلوکی پر شجر کاری کا افتتاح۔سالہا سال سے سے سرکاری زمینوں پر قبضہ کرنے والوں کا سورج ہمیشہ کیلیے غروب۔ گرونانک پارک ،گرونانک یونیورسٹی بنانے کا اعلان۔قبضہ گروپوں،قرضہ خوروں اورسرکاری خزانہ لوٹنے والوں کو نہیں چھوڑوں گا۔با اثر قبضہ گروپوں سے زمینیں چھڑوا کر جنگلات لگائے جائیں گے۔کسی کو این آر او نہیں ملے گا۔ وزیر اعظم کا خطاب ۔عوامی سماجی حلقوں کاقبضہ گروپوں سے اربوں کی زمین واگزار کراکر جنگلات لگانے پر وزیر اعظم کو خراج تحسین اور بھائی پھیرو گردوارہ کی اربوں کی اوقاف کی زمینوں کو بھی قبضہ گروپوں سے چھڑوانے کا مطالبہ۔سکولوں کے گرین جیکٹ پہنے اور سکاؤٹ کی واردیوں میں ملبوس بچوں کا شجر کاری مہم میں حصہ۔سخت سیکورٹی انتظامات میں ہزاروں افراد کا وزیر اعظم کا پر تپاک استقبال۔تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز وزیر اعظم پاکستان عمران خاں جب رانا برادران کے با اثرقبضہ گروپوں سے واگزار کرائی اربوں روپے کی ہزاروں ایکڑ زمین پر شجر کاری مہم کا افتتاح کرنے ہیڈ بلوکی پہنچے تو سکولوں کے گرین جیکٹ پہنے اور سکاؤٹ کی واردیوں میں ملبوس سینکڑوں ہزاروں طلبا اور معززین نے انکا پر تپاک استقبال کیا۔سکھ بچوں نے ترانہ گا کر سماں باندھ دیا۔وزیر اعظم کے دورے کیلیے سخت حفاظتی انتظامات کیے گئے تھے اور ہیلی پیڈ بنائے گئے تھے جن کی کئی دنوں سے سخت نگرانی کی گئی تھی۔ وزیر اعظم جب ہیلی کاپٹر پر یہاں پہنچے تو وہاں پر موجود معززین ،ممبران اسمبلی ،پنجاب حکومت کے زمہ داران اور سکولوں کے ہزاروں بچوں نے ان کا تالیاں بجاکر اور نعرے لگاکر استقبال کیا ،پنڈال کو بڑی خوبصورتی سے بینر اور فلیکس لگا کر سجایا گیا تھا ۔اس موقع پر وزیراعظم نے رانا برادران کے با اثرقبضہ گروپوں سے واگزار کرائی اربوں روپے کی محکمہ انہار کی پچیس سوایکڑ مین پر شجر کاری مہم کا افتتاح کیا۔ہزاروں ایکڑ پر جنگلات لگا کر ملک کے ماحول کو بہتر بنانے اور موسمیاتی تبدیلیوں کو کنٹرول کرنے کیلیے یہ منصوبہ بنایا گیا۔وزیر اعظم نے پودا لگا کر اس مہم کا افتتاح کیا تو بعد میں ہزاروں بسکول کے بچوں نے پودے لگا کر سماں باندھ دیا۔اس موقع پر شرکا سے خطاب کرتے وزیر اعظم نے جنگلات کے پارک کو گرونانک پارک کا نام دیا اور ننکانہ میں ایک گرونانک یونیورسٹی بنانے بنانے کا اعلان کیا۔انہوں نے کہا کہ قبضہ گروپوں،قرضہ خوروں اورسرکاری خزانہ لوٹنے والوں کو نہیں چھوڑوں گا۔با اثر قبضہ گروپوں سے زمینیں چھڑوا کر جنگلات لگائے جائیں گے۔انہوں نے کہا کہ یہ زمینیں با اثر لوگوں نے اقتدار کی آڑ میں سالہا سال سے اپنے ناجائز قبضہ میں رکھیں اور سرکاری خزانوں کو اربوں کا نقصاں پہنچایا۔انہوں نے کہاکہ کسی کو این آر او نہیں ملے گااور چوروں، ڈاکووں،قرضہ خوروں اور سرکاری خزانہ لوٹنے والوں کو ہر گز ہر گز معاف نہیں کیا جائے گا۔عوامی سماجی حلقوں نے قبضہ گروپوں سے اربوں کی زمین واگزار کراکر جنگلات لگانے پر وزیر اعظم کو خراج تحسین پیش کیا ۔اس موقع پر موجود کسان بورڈ پاکستان کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات حاجی محمد رمضان ،معروف سیاسی و سماجی رہنما چوہدری غلام رسول سندھو،پریس کلب کھنڈا موڑ کے صدر رائے زمان نے صحافیوں سے گفتگو کرتے وزیر اعظم کے قبضہ گروپوں سے زمین چھڑوا کر درخت لگانے کے اقدام کو خراج تحسین پیش کرتے کہا کہ وزیر اعظم نے گرونانک پارک اور گرونانک یونیورسٹی بنا کر نہ صرف ملک بھر کے بلکہ دنیا بھر کے کروڑوں سکھوں کے دل جیت لیے ہیں انہوں نے مطالبہ کیا سکھوں کے پاکستان میں دوسرے بڑے گوردوارہ سنگت سنگھ کی بھائی پھیرو میں بائیس سو ایکڑ اراضی پر بھی قبضہ گروپوں کا قبضہ ہے اور با اثر قبضہ گرپوں نے اس سرکاری زمین کوغیر قانونی طور پر بیچ بیچ کر ملکی خزانہ کو بانوے ارب کا نقصان پہنچایا ہے۔انہوں نے گردوارہ کی اربوں کی اوقاف کی زمینوں کو بھی قبضہ گروپوں سے چھڑوانے کا مطالبہ کیا اور اسکی تحقیقات نیب سے کرانے کا مطالبہ کیا۔9-2-2019

یہ بھی پڑھیں  اوکاڑہ : گزشتہ ماہ وکلاء اور جوڈیشری کے درمیان ہونے والا تنازعہ شدت اختیار کر گیا ہے عدالتوں کا بائیکاٹ جاری رہے گا. سفیان نصیر چوہدری ایڈووکیٹ