شہ سرخیاں
بنیادی صفحہ / تازہ ترین / بار سلونا کے قونصلیٹ عمران چوہدری کا قصو ر

بار سلونا کے قونصلیٹ عمران چوہدری کا قصو ر

عا دت جو ہو ، وہی رہنی ،اور نظر آ نی چا ہیے ، جب اس سے الٹا ہو نا شر وع ہو جا ئے تو بندہ بے اختیا ر پو چھتا، اور کہتا پھر تا ہے ، کہ ، یہ کو ن کر رہا ہے ، اس کے پیچھے آ خر مقا صد کیا ہیں ، مگر ، یقین ما نیں ، پڑ ھے لکھے لو گ جب کچھ کر نا چا ہیں تو با رسلونا کی کمیو نٹی کیا پورا پا کستان بد ل سکتا ہے ، ،کہتے ہیں ۔
جب کر نے پر آ ئیں الٹا دریا بہا دیں
جب بھی کسی کے تعا رف میں یہ بتا یا جا ئے کہ اس کے پا س ڈا کٹر کی ڈگر ی ہے تو میں غو ر سے اس پر سنیلٹی کا جا ئز ہ لیتا ہوں ، اس کی ایک خا ص وجہ ہے ، کیو نکہ جو ڈا کٹر بنتے ہیں ، ان کو تعلیم کچھ سے طر ح سے دی جا تی ہے کہ آ پ نے بیما ری کو جڑ سے ختم کر نا ہے اور ڈاکٹر لو گ بہت اچھے سے سمجھتے ہیں کہ با ڈی کے ایک حصے میں درد ہو تا تو تمام با ڈ ی درد محسو س کر تی ہے ، تو لہذا ایک حصے سے درد پو ری با ڈ ی میں پھیل جا ئے تو بہتر ہے اس درد کو جڑ سے ختم کر دیا جا ئے ، اصل ڈا کٹر ، جب کسی سر کا ری اہم سیٹ پر ہو تے ہیں تو وہ اسی فا رمو لے کو مد نظر رکھیں تو ہما رے معاشر ے میں جو خرابیا ں وہ بہت جلد دور ہوسکتی ہیں ، با رسلو نا میں آ ج ایک پر و گرام تھا یو م پا کستان کے حو الے سے ، اس پر وگرام کے با رے کچھ دن پہلے سے کہا جا نے لگا تھا کہ کچھ سال پہلے کی طر ح اس سا ل بھی کچھ مخصوص لو گ آ ئیں گے کیونکہ سفا رت خا نے کے علا وہ بھی یہاں کو ئی بھی پر وگرام ہو تے ہیں اس میں فل پا کستانی کمیو نٹی شر کت نہیں کر تی ، کچھ گر وہ بند ی بھی ہے ، لیکن نا چیز کو اس گر وہ بند ی سے کو ئی لینا دینا نہیں ، لہذا اس پر گر ام کے بارے میں خیال پر انا ہی کیا جا رہا تھا کہ کچھ لو گ مد عو ہو ں گے ، کچھ مجبو ری کی وجہ پر و گرا م میں شر کت نہیں کر سکے ، مگر جب سو شل میڈ یا پر پر وگر ام کو دیکھا تو ایک دم زبا ن سے یہی الفا ظ نکلے کہ یہ سب قصور قو نصلیٹ عمران چو ہدری صا حب کا ہو گا ،قصو ر کیا وہ آ پ کو بتا تے ہیں ، پہلا قصور ، صر ف مخصو ص نہیں بلکے فیملی کے سا تھ لو گ سیٹوں پر بیٹھے نظر آ ئے ،اور ہال اوپر اور نیچے دونوں جگہ فل نظر آ یا ، بڑا قصو ر جو میں تصور کر وں گا وہ یہ ٹھہرا کہ ، با رسلونا کے با قی پر و گر امز کی طر ح یہاں اس با ت کا خیال نہیں رکھا گیا کہ کچھ خاص خاص اپنے چا ہنے والوں کو فر نٹ سیٹو ں پر بیٹھا یا جا ئے ، یہاں دیکھنے میں یہ �آ یا کہ سب مکس ہی بیٹھے تھے ، ویڈ یو ز دیکھتے ایک جملہ یہ سنے کو ملا کہ ہما رے دوست واش روم گے ہیں یہ سیٹ ان کے لیے ہے ،قا رئین خو د انداز ہ لگا لیں کہ قو نصلیٹ صا حب نے مکس لو گوں کو بیٹھا یا ہو گا تو جن کو برا لگا ہو گا وہی بھی یہی کہتے ہوں گے کہ یہ سب سے بڑا قصور ان کا ہے ، اس پر و گرام میں قو می تر انے سنا ئے گے ، کا میا ب پر وگرام کے انقعا د پر میرا ذہن اس پر تھا کہ قو نصلیٹ صا حب اسٹیج پر آ ئیں ان کی تقر یر سنیں تا کہ اندازہ ہو کہ اتنا کا میا ب پر و گرام ہوا ، تما م پا کستانی کمیو نٹی ایسے شامل ہو ئی ، ہال فل ، تو ، پر و گرام کر وانے کے خیا لا ت کیسے ، یا یہ صر ف کر یڈ ٹ قو نصلیٹ صا حب لے رہے ہیں ، لیں جی تعا رف ہو ا کہ امر یکہ ، کینیڈا خد ما ت انجا م دینے کے بعد یہ صا حب با رسلونا آ ئے ہیں ، ڈبل ما سڑ ہیں اور سا تھ ڈا کٹر بھی ہیں، اتنی ایجو کیشن پھر کمال تو نظر آ تا ہے پر و جیکٹ کو ئی بھی ہو ، پر و گرام کیسے کا میا ب نہ ہو ں ، اور گر و پ کیسے ختم ہو کر ایک کمیو نٹی کی شکل اختیا ر نہ کر ئیں ، قو نصلیٹ صا حب نے جو تقر یر کی ، وہ انداز قا ر ئین کو ضر ور بتا ؤ ں گا ، اور چا ہوں گا دنیا میں کہیں بھی کو ئی پا کستا ن کی تر جما نی کر رہا اس کو یہی انداز اپنا نا چا ہیے ،انداز یہ ہے کہ ، اس پر و گرا م میں اسپین کے مقا می لو گ بھی شا مل تھے ، ویڈ یو دیکھا ئی گئی جس میں پا کستان کا کلچر شو کیا گیا ، کیو نکہ ویڈ یو سے اپنا پیغا م سمجھا یا گیا کہ ہم کیا ہے اور کیا چا ہتے ہیں ، کچھ بیا ن کر کہ بھی بتا یا گیا کہ ہما رے قا ئد کی زند گی بھی ایک مثا ل ہے کہ ہما رے لو گ دو سر ے ممالک کے با شند وں کے سا تھ کیسے اچھے انداز میں بر تا ؤ کر تے ہیں ،
اس سے پہلے بہت با ر کا لم میں لکھ چکا ہو ں کے مخصو ص ٹا ئپ کے پر و گراموں میں مخصو ص ٹا ئپ کے لو گ شا مل ہو تے ہیں ، اس کو کمیونٹی کے لیے خدما ت نہ تصو ر کیا جا ئے ، بلکے اس کو ما رکینٹنگ کا ٹول تصو ر کیا جا ئے ، اس میں کو ئی شک نہیں کہ قونصلیٹ عمران علی چو ہد ری صا حب جیسے اعلی تعلیم یا فتہ ہیں اور اس فیلڈ میں ان کو تجر بہ بھی بہت وسیع ہے تو با رسلو نا میں جو ہما ری کمیو نٹی میں خرا بی اور جو درد تھا اس کو ٹھیک کیا اور آ غا ز ہوا ، بہت اچھا آ غا ز ہو ا ، اور دعا کر تے ہیں کہ پو ری دنیا میں ہما رے پا کستانی ایسے ایک سا تھ خو شی کے دن منا ئیں اور با قی دنیا کو مثبت پیغا م جا ئے ۔
عا دت جو ہو ، وہی رہنی ،اور نظر آ نی چا ہیے ، جب اس سے الٹا ہو نا شر وع ہو جا ئے تو بندہ بے اختیا ر پو چھتا، اور کہتا پھر تا ہے ، کہ ، یہ کو ن کر رہا ہے ، اس کے پیچھے آ خر مقا صد کیا ہیں ، مگر ، یقین ما نیں ، پڑ ھے لکھے لو گ جب کچھ کر نا چا ہیں تو با رسلونا کی کمیو نٹی کیا پورا پا کستان بد ل سکتا ہے ، ،کہتے ہیں ۔
جب کر نے پر آ ئیں الٹا دریا بہا دیں

یہ بھی پڑھیں  افتخار چوہدری جوڈیشل کمیشن کےروبرو پیش ہونے کو تیار

error: Content is Protected!!