تازہ ترینعلاقائی

بھائی پھیرو:سٹی پولیس بھائی پھیرومیں ڈاکوؤں اور ٹاوٹوں کے راج کے خلاف انجمن تاجراں کے وفد کی آر پی او شیخوپورہ رینج سے ملاقات

بھائی پھیرو﴿نامہ نگار﴾ تھانہ سٹی پولیس بھائی پھیرو میں ڈاکووئں اور ٹاو،ٹوں کے راج کے خلاف انجمن تاجراں کے وفد کی آر پی او شیخوپورہ رینج سے ملاقات۔سٹی پولیس عوام کو تحفظ دینے کی بجائے ہراساں اور دہشت زدہ کر کے رشوت بٹورنے لگی۔شام کے بعد کئی راستوں پر ناکے لگا کر عوام کو چوروں اور ڈاکوئوں سے ڈرا دھمکا کر عوام کیلیے راستے سے گزرنابند کرکے مجبور مسافروں سے ،،روڈ ٹیکس،،وصول کیا جاتاہے۔ٹائوٹوں کے ذریعے رشوت بٹور کر منشیات فروشوں،جوئے بازوں،اور کالا دھندہ کر نے والوں کو کھلی چھٹی دے رکھی ہے۔انجمن تاجراں کے وفد کی شکایات۔آر پی او چوہدری زوالفقار چیمہ نے ڈی پی او قصور کو تحقیقی رپورٹ پیش کر نے کا حکم تفصیلات کے مطابق تھانہ سٹی پولیس بھائی پھیرو میں عوامی کی بڑھتی مشکلات کے بارے مرکزی انجمن تاجراںبھائی پھیرو اور صحافیوں کے ایک پانچ رکنی وفد نے شیخ محمد منشا کی قیادت میں آر پی او شیخوپورہ چوہدری ذولفقار چیمہ سے گزشتہ روز ملاقات کی ۔وفد میں ملک عبدالحفیظ شاہد،شیخ خالد رفیق ،محمد یونس ،اور حاجی محمد رمضان شامل تھے ۔وفدنے آر پی او کو بتایا کہ سٹی پولیس سر شام شارع عام راستوں پل پرناواں،شیر پور روڈ،جلیکی روڈ،راجباہ نیاز بیگ ،اور دیگر کئی راستوں پر پکٹیں لگا کر راستوں سے عوام کی آمدو رفت پر پابندی لگا دیتی ہے اور مزکورہ راستے کو چوروں اور ڈاکوئوں کی آماجگاہ کہہ کر اور غیر محفوظ کہہ کرمسافروں کو ان راستوں سے گزرنے پر پابندی لگا دیتی ہے۔سٹی پولیس عوام کو تحفظ کا احساس دلانے کی بجائے مسافر وں کو ہراساں اور دہشت زدہ کر کے مجبورمسافروں سے رشوت بٹورتی ہے۔شہر یوں کا جان و مال نہ سڑکوں پر محفوظ ہے اور نہ شہر کے اندر لوگ محفوظ ہیں۔چوریوں،ڈکیتیوں اور لوٹ مار کا بازار گرم ہے۔کئی شریف شہری اپنا سب کچھ لٹوا کر جب مقدمہ درج کروانے کیلیے تھانہ سٹی جاتے ہیں تو مظلوم لوگوں کے مقدمات ر درج نہ کر کے شریف شہریوں کو ذلیل و خوار کر کے تھانہ سے نکال دیا جاتا ہے۔مقدمات درج نہ کر کے پولیس جرائم پیشہ افراد کو تحفظ فراہم کر تی ہے ۔اعلی پولیس حکام اورعدالتی احکامات کے باوجود ایس ایچ او وقار مقدمات درج نہیں کرتا اور سٹی پولیس اعلی حکام کی آنکھوں میں دھول جھونکنے کیلیے اور کرائم گراف کم دکھانے کیلیے درجنوں مظلوم لوگوں کو انکے قانونی حق سے محروم کر کے بنیادی انسانی حقوق کی دھجیاں بکھیر تی ہے ۔ایک طرف پولیس شریف شہریوں پر جھوٹے مقدمات بناکر،ہراساں کر کے،تھانہ میں بے گناہوں پرجھوٹے مقدمات بنا کر، انہیں ناکوں پر ہراساں کر کے اپنی جیبیں بھرتی ہے تو دوسری طرف شہر بھر میں پولیس کی سرپرستی میںجوئے کے اڈے،منشیات کے اڈے ،پرچی جوا،جعلی سوڈا واٹر کی فیکٹریاں سر عام لوگوں کی صحتوں اور جان و مال کی تباہی کا موجب بن چکی ہیں۔تھانہ سٹی پر ٹائو ٹوں کا راج ہے جہاں سر عام جرائم پیشہ افراد کو جرم کر نے کی کھلی چھٹی دینے کیلیے بولیاں لگتی ہیں۔شہر کی انجمن تاجراں کے رہنمائوں،اور عوامی سماجی حلقوں نے کہا کہ سٹی پولیس نے آر پی او شیخوپورہ رینج کی منشیات فروشوں ،رشوت خوروں،اور جرائم پیشہ افراد کے خلاف چلائی مہم کو ناکام بنا دیا ہے اور تھانہ کو عوام کے لیے دارالامن بنانے کی بجائے جرائم پیشہ افراد اور ٹائوٹوں کیلیے،، محفوظ پناہ گاہ،، بنا رکھا ہے۔وفد کے جواب میں آر پی او نے ڈی پی او قصور سید خرم عباس بخاری کو مذکورہ شکایات کے بارے تفصیلی رپورٹ جلد از جلد پیش کر نے کا حکم دیا۔

یہ بھی پڑھیں  پاکستان مردہ باد کا نعرہ لگانے والے کے نمائندوں کوپریس کانفرنس کی اجازت کیوں؟

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker