پاکستانتازہ ترین

بھکر کے دوقومی اور چار صوبائی حلقوں کے 71امیدوار اپنی ضمانتیں ضبط کروابیٹھے

bhakkarبھکر(مانیٹرنگ سیل)2000روپے میں ایم پی اے اور 4000روپے میں ایم این اے کا خواب دیکھنے والے ضلع بھکر کے دوقومی اور چار صوبائی حلقوں کے 71امیدوار اپنی ضمانتیں ضبط کروابیٹھے تفصیلات کے الیکشن کمیشن آفس پاکستان کے وضع کردہ قانون کے مطابق الیکشن میں حصہ لینے ہر امیدوار کو صوبائی حلقہ انتخاب کیلئے 2000اور قومی اسمبلی کے انتخاب کیلئے 4000روپے ضمانت جمع کروانی ہوتی ہے اور حلقہ میں کاسٹ ہونے والے کل ووٹوں کے 1/8فیصد ووٹ حاصل کرنے یہ ضمانت امیدوار کو واپس کردی جاتی ہے اور اگر کوئی امیدوار اس سے کم ووٹ حاصل کرے تو اس کی ضمانت ضبط ہوجاتی ہے اس لیے ضلع بھکر کے قومی اسمبلی کے حلقہ NA73میں عام انتخاب میں حصہ لیا اس حلقہ میں کل 230052ووٹ کاسٹ ہوئے اور اس طرح ہر امیدوار کو 1/8کے حساب سے 28756ووٹ حاصل کرنے تھے لیکن ان میں صرف دو امیدوار اس ہدف کو عبور کرسکے اور اس طرح اس حلقہ سے 15امیدوار جن میں مجلس وحدت المسلمین کے امیدوار احسان اللہ خان بلوچ نے 10340،پاکستان پیپلزپارٹی پارلیمنٹرین کے امیدوار اصغر علی جاڑا نے 3225،آزاد امیدوار امیر محمد خان نے 539،جماعت اسلامی کے امیدوار عبدالحمید خان نے 1588،آزاد امیدوار عزیز احمد خان مستی خیل نے 235،آزاد امیدوار فاروق احمد خان حسن خیلی نے 388،سنی اتحاد کونسل کے قاری فتح خان نے 391،متحدہ دینی محاز کے قاضی نعیم اختر نے 577،آزاد امیدوار محمد ارشد اعوان 2230،پاکستان جسٹس پارٹی کے محمد ارشد فقیر نے417،آزاد امیدوار محمد خان نے 124،متحدہ قومی موومنٹ کے امیدوار محمد نواز نے 464،آزاد امیدوار انظر کہاوڑ نے 3355،آزاد امیدوار نجیب اللہ خان نیازی نے 3579اور آزاد امیدوار نگہت یاسمین بیگم نے 595ووٹ لیے اسی طرح حلقہ این اے 74میں 10امیدوار انتخابی میدان میں اترے اور اس حلقہ میں کل 255739ووٹ کاسٹ ہوئے اور ہر امیدوار کو اپنی ضمانت محفوظ کروانے کیلئے 31967ووٹ حاصل کرنے تھے لیکن اس میں سے صرف 2امیدوار اپنی ضمانتیں بچانے میں کامیاب ہو ئے جبکہ باقی آٹھ جن میں حبیب اللہ خان نوانی آزاد امیدوار نے 8226 ووٹ لیئے پاکستان پیپلزپارٹی پالیمنٹرین نے 13421 ووٹ لیے پاکستان تحریک انصاف کے رفیق احمد خان 6078 ووٹ لیے۔آزاد امیدوار سکندر احمد خان نے 3041 ووٹ لیے۔آزاد امیدوار سید مختیار حسین شیرازی نے 234 ووٹ لیے متحدہ قومی موومنٹ کے علامہ سید فرمان رضا عابدی نے 227 ووٹ لیے آزاد امیدوار مدثر نذیر اترا نے 194 ووٹ لیے اور جماعت اسلامی پاکستان کے امیدوار نوید ظفر شاہ گیلانی نے 1347 ووٹ حاصل کیے اور اپنی ضمانتیں نہ بچا سکے اسی طرح صوبائی اسمبلی کے حلقہ پی پی 47میں کل 14امیدواروں نے حصہ لیا اور یہاں کل 99574ووٹ کاسٹ ہوئے اور ہر امیدوار کو اپنی ضمانت بچانے کیلئے 12446ووٹ حاصل کرنے تھے لیکن یہاں بھی اس ہدف کو عبور کرنے میں دو امیدوار کامیاب ہوئے جبکہ باقی بارہ امیدوار جماعت اسلامی کے امیدوار افتخار حسین شاہ نے 1309،پاکستان تحریک انصاف کے امیدوار جاوید اقبال نے 5006،ایم کیو ایم جاوید اقبال نے 291،پی پی پی پی کی امیدوار خورشید بیگم نے 1146،متحدہ دینی محاذ کے امیدوار ذوالقرنین حید ر نے 372،آزاد امیدوار ضیاء اللہ خان نے 57،آزاد امیدوار فاروق احمد خان حسن خیلی نے 54،پاکستان جسٹس پارٹی کے محمد ارشدفقیر نے306،جے یو آئی ف گروپ کے محمد یوسف نے 167،آزاد امیدوار ندیم احمد خان نے 179اور آزاد امیدوار نگہت یاسمین بیگم نے 260ووٹ لیے اور اپنی ضمانتیں ضبط کروا بیٹھے اسی طرح صوبائی اسمبلی کے حلقہ پی پی 48میں بھی 14امیدواروں نے انتخابات میں حصہ لیا اور کل 103963ووٹ کاسٹ ہوئے اور ہر امیدوار کو 1/8کے حساب سے 12995ووٹ حاصل کرنے تھے لیکن صرف دو امیدوار مطلوبہ ہدف حاصل کرسکے جبکہ باقی 12امیدوار جن میں متحدہ دینی محاذ کے امیدوار ذوالقرنین حیدر نے 72،جماعت اسلامی کے امیدوار رستم علی ساقی نے 170،سنی اتحاد کونسل کے امیدوار شیخ الحدیث مفتی محمد امیر عبداللہ خان نے 953،پی پی پی پی کے امیدوار علمدار حسین نے 10308،آزاد محمد امیدوار محمد ارشد اعوان نے 391،آزاد امیدوار محمد اصغر علی نے 151،آزادامیدوار ملک انظر علی کہاور نے 7748،پاکستان مسلم لیگ کے امیدوار ملک نذر عباس کہاوڑ نے12499،آزاد امیدوار مہربان علی نے 708،جے یو آئی ایف کے عبدالروف نے 93آزاد امیدوار مولانا محمد ابوبکر نے362،جمعیت الشاعت التوحید کے امیدوار مولوی علم الدین خاکی نے 83ووٹ حاصل کیے اور ضمانتیں ضبط کروابیٹھے اسی طرح حلقہ پی پی 49میں کل 11امیدواروں نے انتخابات میں حصہ لیا اور کل 137762ووٹ کاسٹ ہوئے جن میں 1/8کے حساب سے 17220حاصل کرنے تھے جن میں سے 2امیدوار کامیاب ہو ئے جبکہ باقی آزاد امیدوار جہانزیب گل نے 253 ووٹ لیے، متحدہ قومی مووومنٹ پاکستان کے امیدوار سید کاشف علی رضوی نے 159 ووٹ لیے پاکستان تحریک انصاف کے امیدوار طارق حمید خان نے 1818 ووٹ لیے آزاد امیدوار محمد اسد جاوید مگسی نے 1491 ووٹ لیے آزاد امیدوار محمد افضل حیات قیصر نے 72 ووٹ لیے آزاد امیدوار محمد طاہر سندیلہ نے 111 ووٹ لیے آزاد امیدوار مرزا نذیر احمد بیگ نے 633 ووٹ لیے پی پی پی کے امیدوار ملک اصغر اقبال چھینہ نے 6582 ووٹ لیے اور جماعت اسلامی پاکستان کے امیدوار یوسف خان نے 1762 ووٹ لیے اور ضمانتیں ضبط کروا بیٹھے اسی طرح صوبائی اسمبلی کے حلقہ پی پی 50میں 18امیدواروں نے انتخابات میں حصہ لیا اور کل 143141ووٹ کاسٹ ہوئے ہر امیدوار و 1/8کے حساب سے 17892ووٹ حاصل کرنے تھے مگر صرف 3امیدوار ضمانتیں محفوظ کرنے میں کامیاب ہوئے جبکہ باقی 15امیدوار جن میں احمد نواز خان آزاد امیدوار نے 9881 ووٹ متحد ہ قومی مووومنٹ پاکستان کے امیدوار حاجی ملک نور زمان چھبورا نے 298 ووٹ ۔ سنی اتحاد کونسل کے امیدوار ڈاکٹر عبدالرؤف اعوان نے 40ووٹ ، آزاد امیدوار رفیق احمد خان نیازی نے156 ووٹ ۔آزاد امیدوار سجاول حسین شاہ ٹمی نے 825 ووٹ ،سردار سکندر احمد خان آزاد امیدوار نے 12349 ووٹ۔ آزاد امیدوار سید مختیار حسین شیرازی نے 232ووٹ ۔ آزاد امیدوار محمد گلستان ایڈووکیٹ نے 77 ووٹ ۔مدثر نذیر اترا آزاد امیدوار نے 274ووٹ ۔پاکستان مسلم لیگ ن کے سابق ایم پی اے ملک عادل حسین اترا نے 459 ووٹ۔ متحدہ دینی محاذ کے امیدوار مولانا عبدالغفور حقانی نے 7697 ووٹ. جمعیت علمائے اسلام ف گروپ کے مولانا محمد صفی اللہ نے 3274 ووٹ۔ جماعت اسلامی پاکستان کے امیدوار نوید احسن نیاز نے 615 ووٹ ۔ اور آزادامیدوار یاسر راؤ خان نے 70 ووٹ ۔پی ٹی آئی ے ڈاکٹر نثار احمد کے 5063ووٹ حاصل کیے اور اپنی ضمانتیں ضبط کرو ا بیٹھے واضح رہے کہ 1/8ووٹ حاصل کرنے والے امیدواروں پر یہ لازم ہے کہ وہ الیکشن کی تاریخ کے 6ماہ بعد اپنی ضمانت واپس حاصل کرلیں ورنہ بعد میں وہ اس کی واپسی کے حقدار نہیں ہوگے ۔

یہ بھی پڑھیں  نگراں وزیراعظم کیلئےناصراسلم زاہد کےنام پرمتفق ہونے کا امکان

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker