تازہ ترینجاوید صدیقیکالم

بول کی جیت ۔۔۔۔منہ لٹکائے ہوئے ظالم!!

javidتیرہ اگست تک عدالت نے ایگزیکٹ کے خلاف مقدمات کی پیروی کرتے ہوئے ایف آئی اے کو تنبیہ کیا ہے کہ وہ حقیقی ثبوت پیش کریں بصورت عدالت فیصلہ کرنے کی حق بجانب ہوگی اور انشااللہ تعالیٰ فیصلہ ایگزیکٹ اور بول کے حق میں ہوگا۔بول کی باقائدہ نشریات کی بندش کرنے والے اپنے منہ لٹکائے بیٹھے ہیں کیونکہ مزید اب یہ ظلم نہیں کرسکتے، یاد رہے کہ حق کو زیادہ دیر دبایا نہیں جاسکتا، ایف آئی اے خود کرپشن اور بدعنوانی کے دلدل میں ہے وہ کسی کا کیا احتساب کریگی، اسی کرپشن کی سب سے بڑی وجہ بول کی نشریات کو روکنا بھی ہے ، ظاہر ہے حکومت کی منشا، خواہش کی تکمیل کیلئے صرف ایک چینل کے خوف اور ڈرکی وجہ سے میڈیا میں ابھرنے والا مشتری سیارہ بول کو ڈبونے کی ناکام کوششیں کی گئیں ہیں، پس پشت وہ چینل بھی اچھی طرح واقف ہوجائیگا کہ نہ میڈیا کو دبایا جاسکتا ہے اور نہ روکا جاسکتا ہے ، یہاں حیرت اور افسوس کا ملا جلا احساس ہے کہ بول کی بندش میں میڈیا کا ایک چینل ہے،جب اس کی بندش ہوئی تھی تب یہ چیخ چیخ کر کہتا تھا کہ میڈیا کے تمام چینلز کو ایک ہونا چاہیئے ایک دوسرے کو کام کرنا چاہیئے، اب کہاں گئی وہ باتیں ،وہ وعدے ! اتنے فرعون نہ بنو کہ مٹ جاؤ، بہہ جاؤ۔!! بول نے جو کچھ کہا ہے وہ حقیقت میں کرکے بھی دکھایا ہے ۔ بول چینل ایسا ہے جیسے پاکستان میں ملٹی نیشنل چینل یعنی اپنے وطن میں رہتے ہوئے بین الاقوامی سطح کے چینل میں کام کرنا۔ یقینا ً بول کے نظام، طریقہ کار کو تمام میڈیا کے ملازمین، صحافی حضرات نہ صرف پسند کرتے ہیں بلکہ اس پر فخر بھی کرتے ہیں اور امید کرتے ہیں کہ مستقبل قریب میں دیگر بڑے چینلز بھی بول کی نظام اور تمام طریقہ کار کو اپنائیں گے تاکہ حق دار کی حق تلفیاں نہ ہو اور بہتر خوشگوار ماحول میں کام کرسکیں۔ اللہ پاکستان کے میڈیا انڈسٹریزمیں کالی بھیڑوں کا خاتمہ کرے جو شفارش، چاپلوسی، منافقت، موقع پرستی، سیاست، عداوت، کینہ، بغض ،بد اخلاقی ،بد زبانی اور نا اہلی کے مرتکب ہیں ان سے میڈیاسے چھٹکارہ دلادے۔آمین ثما آمین

یہ بھی پڑھیں  سرائے مغل اورگردنواح میں2800 سو ایکڑسرکاری اراضی کی نیلامی یکم فروری کو ہوگی

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker