تازہ ترینعلاقائی

بورے والا:بااثرزمینداروں کے بیٹوں نے غریب کی بیٹی کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا

boraywalaبورے والا(نامہ نگار)گاؤں کے بااثر زمینداروں کے بیٹوں نے غریب محنت کش کی 14سالہ بیٹی کو اغوا کے بعد گن پوائنٹ پر مبینہ اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا،15روز گزرنے کے باوجود زیادتی کا شکار حواکی بیٹی انصاف کے لیے دربدر،غریب خاندان کا ملزمان کی گرفتاری اور مقدمہ درج کرنے کا مطالبہ،تفصیلات کے مطابق نواحی گاؤں نوشہرہ جملیرا کے رہائشی غریب محنت کش غلام فرید کی 14سالہ بیٹی13ستمبر کو حسب معمول اپنے گھر پر موجود تھی کہ اُسی گاؤں کی رہائشی خاتون حلیماں بی بی اور چاہ لکھوکا کی رہائشی مریم بی بی اُسے مزدوری کے بہانے گھر سے بلوا کر کھیتوں میں لے گئی جہاں اُسی گاؤں کے بااثر زمینداروں کے بیٹے یاسین جملیرا،علی احمد جملیرا اور سجاد جملیرا موٹر سائیکلوں پر آگئے اور اسلحہ کے زور پر محنت کش کی بیٹی 14سالہ(نسرین)کو زبردستی اغوا کرکے قریبی مکئی کی فصل میں لے گئے جہاں انہوں نے گن پوائنٹ پر اُسے مبینہ اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا اور فرار ہو گئے اطلاع ملنے پر بچی کے والدین نے ملزمان کے خلاف کاروائی کی درخواست متعلقہ تھانے میں دیدی لیکن میڈیکل رپورٹ نہ ملنے سے مقدمہ درج نہ ہو سکا عدالت کے حکم پر زیادتی کا شکار بچی کا میڈیکل کروایا گیا جس میں زیادتی ثابت ہو گئی اس واقعہ کے خلاف غریب والدین اوررشتہ داروں نذیر احمد،والدہ عزیزاں بی بی،محمد شفیق،غلام حسین،محمد سلیم اور ظہوراں بی بی نے میڈیا کے نمائندوں کو بتایا کہ ملزمان بااثر ہیں اور پولیس پر مقدمہ درج نہ کرنے کیلئے دباؤ ڈال رہے ہیں انہوں نے وزیر اعلیٰ پنجاب سے انصاف کے حصول کا مطالبہ کیا ہے۔۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button