شہ سرخیاں
بنیادی صفحہ / پاکستان / پاکستان کی سب سے بڑی ٹرانسپورٹ سروس کا افتتاح

پاکستان کی سب سے بڑی ٹرانسپورٹ سروس کا افتتاح

Metro-Bus-Servesلاہور(نمائندہ خصوصی) پاکستان کی تاریخ میں اپنی نوعیت کے منفرد سفری نظام ’’میٹرو بس سروس‘‘ کا  باقاعدہ افتتاح اتوار کو مشرقی صوبے پنجاب کے صدر مقام لاہور میں کردیا گیا ہے۔لاہور کے علاقے نشترکالونی کے قریب میٹرو بس کے پہلے ٹرمینل پر افتتاح کی مرکزی تقریب منعقد ہوئی جس میں 17 ممالک کے سفراء اور ملکی اور غیرملکی مہمانوں نے بڑی تعداد میں شرکت کی جب کہ پاکستانی میڈیا کے ساتھ ساتھ عالمی میڈیا کے درجنوں ارکان بھی اس موقع پر موجود تھے۔ ترکی کے نائب وزیراعظم کی قیادت میں ترک حکومت کا ایک اعلیٰ سطح کا وفد بھی میٹرو بس پروجیکٹ کی افتتاحی تقریب میں خصوصی طور پر شریک تھا۔ مسلم لیگ(ن) کے قائد میاں نواز شریف اور وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف نےایک بڑی تقریب کے دوران اس عوامی پروجیکٹ کا افتتاح کیا۔صوبائی حکومت کا دعوی ہے کہ گجومتہ سے شاہدرہ تک گھٹنوں میں طے ہونے والا راستہ منٹوں میں طے ہوگا۔ ساتھ ہی یہ دعوی بھی ہے کہ 27 کلومیٹر طویل روٹ پر ہر 3 منٹ کے بعد ایک بس مسافروں کو مل جائے گی۔ ایسا ہوگیا تو لاہوریوں کو تو شاید استنبول کے مزے آجائیں۔ افتتاحی تقریب کو چار چاند لگانے کے لیے مختلف مقامات پر علاقائی اور ثقافتی مناظر بھی دیکھنے کو ملے۔ مختلف کالجز اور یونیورسٹیوں کے طلباء کو عوام کی رہنمائی کا فریضہ سونپا گیا تھا۔ یہ بات قابل ذکر ہے کہ یہ منصوبہ خود ترکی کے منصوبے سے بھی کم عرصہ میں مکمل ہوا ہے۔ ترکی میں 42 کلومیٹر کا میٹرو بس سسٹم3 سال میں مکمل ہوا تھاجب کہ لاہور میں یہ منصوبہ11 ماہ کی قلیل مدت میں مکمل کیا گیا ہے۔ منتظمین کے مطابق میٹرو بسیں پہلے4 ہفتے عوام کے لیے مفت چلیں گی اور مسافروں سے کسی قسم کا کرایہ وصول نہیں کیا جائے گا۔ ہفتے کو میٹرو بس کے روٹ پر تجرباتی طور پر بسیں چلائی گئیں ۔رات گئے تک ہزاروں مزدور فنشنگ کے کام میں مصروف تھے۔ دلچسپ بات یہ کہ صرف میٹرو بس سروس کے لیے گنجان علاقوں کے اوپر خصوصی پل یعنی فلائی اوور بنایا گیا ہےجیسے کئی ممالک ٹرینیں چلتی ہیں۔ دوسری جانب اس موقع پرملک کے سب سے بڑے شہر اور کاروباری مرکز کراچی کے باسیوں کو پھر یاد آئے گا ماس ٹرانزٹ پروگرام جو فائلوں در فائلوں میں دب چکا ہے۔

یہ بھی پڑھیں  ینگ ڈاکٹرز کے اجلاس پر پولیس کا چھاپہ18گرفتار