پاکستانتازہ ترین

حکومت اور سپریم کورٹ کے درمیان نئی محاذ آرائی پیدا ہو سکتی ہے۔ فاروق ایچ نائیک

farooq h naiqاسلام آباد(بیورو رپورٹ) کابینہ کی اقتصادی رابطہ کمیٹی(ای سی سی) کے منگل کے روز ہونے والے اجلاس میں وزیر قانون و انصاف فاروق ایچ نائیک نے خبر دار کیا کہ اگر سی این جی کی قیمتوں کو پٹرول کے 80فیصد کرنے کی منظوری دی جائے تو اس سے حکومت اور سپریم کورٹ کے درمیان ایک نئی محاذ آرائی پیدا ہو سکتی ہے کیوں کی وزارت پٹرولیم کی گائیڈ لائنز کی منظوری سے سی این جی کی قیمتوں میں ہوش ربا اضافہ ہوگا جو حکومت کیلئے آنے والے انتخابات میں مشکلات بھی پیدا کرسکتی ہے۔اجلاس میں موجود ذرائع کے مطابق وزیر قانون نے اجلاس کو بتایا کہ وزارت پٹرولیم کے پاس سی این جی کی قیمتوں کے تعین کا اختیارنہیں ہے ،وزارت پٹرولیم پالیسی نہیں صرف گائیڈ لائنز دے سکتی ہے،اجلاس میں آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی (اوگرا ) اور وزارت پٹرولیم دونوں کو ہدایت کی گئی کہ وہ سی این جی کی قیمتوں کے تعین کے حوالے سے الگ الگ سمری پیش کریں۔۔

یہ بھی پڑھیں  سینیٹ: ڈاکٹر عافیہ صدیقی کی رہائی کیلئے متفقہ قرارداد منظور

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker