تازہ ترینعلاقائی

کروڑوں روپوں سے تعمیر ہو نے والے سول ہسپتال ڈسکہ کی زبوں حالی

ٖڈسکہ(نامہ نگار)کروڑوں روپوں سے تعمیر ہو نے والے سول ہسپتال ڈسکہ کی زبوں حالی ،ایمرجنسی میں آکسیجن سمیت زندگی بچانے والی ادویات ،سرنجیں،بینڈیج ،حتی کہ بلڈ پریشر چیک کر نے والاآلہ تک ناپید،ڈیوٹی ڈاکٹروں نے ایمرجنسی میں آنے والوں کو ابتدائی طبی امداد دینے کی بجائے گوجرانوالہ روانہ کرنا وطیرہ بنالیا ،غریب مریض اور ورثاء ذلیل و خوار حقائق کے مطابق ہسپتال مذکور کی ایمر جنسی کسی بھی قسم کی ادویات نہ ہو نے کی وجہ سے اور آکسیجن کی عدم دستیابی سے کئی قیمتی جانیں ضائع ہو نے کا خطرہ پیدا ہوتا جا رہا ہے مریضوں کو معمولی دوائی بھی حتی کہ انجکشن لگانے کے لئے سرنج تک بازار سے خریدنی پڑتی ہے دوسری طرف آؤٹ ڈور میں میڈیکل سپیشلسٹ ڈاکٹر فرح کامران اور انچارج شعبہ بچگان لیڈی ڈاکٹر رفعت شفیق ڈیوٹی دینے کی بجائے سارا دن ایم ایس یا دوسرے کمرہ میں چائے پینے کے بہانے بیٹھ کر بغیر مریض دیکھے چلی جاتی ہیں جس بارے بارہا ایم ایس کو اطلاع دی گئی مگر صورتحال جوں کی توں ہے طرفہ تماشہ یہ کہ شعبہ بچگان میں ڈاکٹر کی عد م موجودگی پر سعید نامی وارڈ بوائے ڈاکٹر بن کر مریضوں کو دیکھنے میں مصروف ہو تا ہے ڈسکہ کی عوامی ،فلاحی ،سماجی تنظیموں کے نمائندوں نے وزیر اعلی پنجاب ،سیکرٹری ہیلتھ سمیت اعلی حکام سے فوری طور نوٹس لینے اور اصلاح احوال کا مطالبہ کیا ہے۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker