تازہ ترینعلاقائی

ڈیرہ غازیخان:قیدیوں کی دینی واخلاقی تربیت انہیں معاشرےکافعال شہری بناسکتی ہے، ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج

ڈیرہ غازیخان ( جنید ملک سے).ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج ڈیرہ غازیخان خالد نوید ڈار نے کہا ہے کہ قیدیوں کی دینی و اخلاقی تربیت کر کے انہیں معاشرے کا فعال شہری بنایاجاسکتاہے . انہوں نے معمولی جرائم میں ملوث نو عمر حوالاتیوں کو ایک بیرک میں رکھنے اور انہیں انڈور سپورٹس سہولتیں فراہم کرنے کی ہدایت کی ہے . انہوں نے یہ بات سنٹرل جیل ڈیرہ غازیخان کے معائنہ کے موقع پر کہی . ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج نے قیدیوں کی مختلف بیرکوں اور اسیران کے کچن کا معائنہ کیا اور قیدیوں کیلئے تیار کیے گئے کھانے کے معیار کو چیک کیا . انہوں نے جیل میں سرسری سماعت کے بعد معمولی جرائم میں ملوث ضلع ڈیرہ غازیخان کے آٹھ قیدیوں باقر حسین ، محمد رفیع ، محمد منور ،عرفان ، باقر حسین ولد واحد بخش ، جنید ، اقبال اور حسنین کو 20 ,20 ہزار روپے کے ذاتی مچلکوں پر رہا کرنے کے احکامات بھی جاری کیے . ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج نے جیل ہسپتال کا معائنہ کرتے ہوئے ہدایت کی کہ قیدیوں کی صحت کا خیال رکھنے کیلئے ہر ماہ ان کا طبی معائنہ کیا جائے نیز مختلف امراض میں مبتلا کسی قیدی کی ڈیوٹی اسیران کے کچن میں نہ لگائی جائے . ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج نے نو عمر قیدیوں کو کمپیوٹر کی تعلیم دینے کیلئے قائم کیے گئے سنٹر کا بھی معائنہ کیا اور جیل انتظامیہ کے اس اقدام کی تعریف کی . معائنہ کے موقع پر مجسٹریٹ دفعہ 30 محمد مظہر مہار، سپرنٹنڈنٹ جیل سید بابر علی ، ڈپٹی سپرنٹنڈنٹ محمد خالد مجوکہ ، ڈپٹی ڈسٹرکٹ پراسیکیوٹر ملک اللہ داد ارشد ، سپرنٹنڈنٹ ڈسٹرکٹ جج قاضی محمد ندیم اور سیکرٹری بار محمد طاہر عبداللہ ہمراہ تھے .

یہ بھی پڑھیں  بلوچستان سے 8امیدوار پہلی بار سینیٹ کے رکن منتخب

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker