تازہ ترینعلاقائی

ڈیرہ غازیخان میں بھی سانحہ کوئٹہ کیخلاف احتجاج و ریلی

dg-khanڈیرہ غازیخان(مانیٹرنگ سیل) ملک کے دیگر شہروں کی طرح ڈیرہ غازیخان میں بھی سانحہ کوئٹہ کیخلاف شیعہ علماء کونسل کا احتجاج ، شیعہ علماء کونسل کے تحت سینکڑوں مرد و خواتین بچوں کی مرکزی امام بارگاہ رضویہ سے احتجاجی ریلی ،ٹریفک چوک پر سفاکانہ واقعہ کیخلاف مظاہرین کا دھرنا ،تفصیلات کے مطابق شیعہ علماء کونسل کے زیر اہتمام ڈیرہ غازیخان میں مرکزی امام بارگاہ رضویہ سے سانحہ کوئٹہ کیخلاف سینکڑوں مرد و خواتین اور بچوں نے احتجاجی ریلی نکالی ریلی میں شریک سینکڑوں مرد و خواتین اور بچوں نے شہر کی مختلف شاہراؤں پر دہشت گردی کیخلاف ہاتھوں میں عَلم، بینرز اور پوسٹرز اٹھا کر پیدل مارچ کیا ریلی میں شریک شرکاء نے کوئٹہ میں ہزارہ قبائل کے بیگناہ افراد کے قتل و عام کیخلاف شدید نعرہ بازی اور نوحہ خوانی کرتے ہوئے ٹریفک چوک پہنچے جہاں ملک میں جاری دہشت گردی اور بد امنی کیخلاف دھرنا دیا گیا اور اس موقع پر شیعہ علماء کونسل کے مقامی رہنماؤں سید ندیم حیدر نقوی، کرم حسین زرگر ، زاہد حسین زیدی ، حاجی گدا حسین شمسی نے کوئٹہ میں جاری دھرنا کے شرکاء سے اظہار یکجہتی کرتے ہوئے حکومتی ارباب و اختیار سے مطالبہ کیا ہے کہ بلوچستان میں حکومتی رٹ مکمل طور پر ختم ہوگئی ہے گورنر پنجاب خود اس بات کا اظہار کر چکے ہیں کہ وہ بے بس ہو گئے ہیں جبکہ پولیس بھی وہاں پر امن وامان کے قائم رکھنے میں مکمل طور پر ناکام ہو چکی ہے حکومتی بے حسی کا عالم یہ ہے کہ تقریباً 24گھنٹے متیوں کیساتھ شدید سردی میں دھرنا دینے کے باوجود کسی نے بھی متاثرہ سے رابطہ نہ کیا انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم اور تمام حکومتی ادارے بری طرح ناکام ہو چکے ہیں وزیر اعلیٰ بلوچستان کو فوری طو رپر مستعفیٰ ہو جانا چاہیے موجودہ حکومت کو بھی حکومت کرنے کا کوئی جواز نہ بنتا ہے پورے ملک میں دہشت گردوں نے عوام کو نا حق مارنے کا سلسلہ جاری رکھا ہوا ہے جب سے موجودہ حکومت آئی ہے دہشت گردی میں اضافہ ہوگیا ہے انہوں نے مطالبہ کیا ہے کہ خصوصاً کوئٹہ کو فوج کے حوالے کی اجائے اور امن و امان قائم کرنے میں ناکامی پر بلوچستان حکومت کو فوری طور پر بر طرف کیا جائے ۔ٹریفک چوک پر دھرنے کے دوران سینکڑوں کی تعداد میں مرد و خواتین ،بچے موجودہ تھے ۔

یہ بھی پڑھیں  بٹل ،مدار پور ،سیکٹر، بھارتی افواج کی بلا اشتہال فائرنگ،خوف و ہراس ،عوام محصور

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker