تازہ ترینعلاقائی

ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر فیصل شہزاد کی جامعہ مسجدرحمانیہ چشتیہ گوگیرہ میں کھلی کچہری

اوکاڑہ(محمد مظہررشید چودھری سے) ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر فیصل شہزاد کی جامعہ مسجدرحمانیہ چشتیہ گوگیرہ میں کھلی کچہری،پولیس کی تعریف و توصیف پر پابندی لگا دی،پیش ہونے والے دیہاتیوں کی درخواستوں پر موقع پر احکامات جاری،درخواستوں پر دئیے گئے احکامات کا فالو اپ لینے کا سسٹم بھی تشکیل دے دیا،تفصیلات کے مطابق وزیر اعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کے ویژن اور آئی جی پنجاب انعام غنی کی ہدایات کے تحت عوام کو ان کی دہلیز پر انصاف مہیا کرنے کے لئے ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر فیصل شہزاد نے نور شاہ روڈ گوگیرہ پر واقع جامعہ مسجدرحمانیہ چشتیہ میں کھلی کچہری لگائی ڈی پی او نے نماز جمعہ بھی مسجد میں ادا کی جس کے بعد انہوں نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کھلی کچہری منعقد کرنے کا مقصد عوام کو ان کی دہلیز پر انصاف مہیا کرنا ہے ،مسجد خدا کا گھر ہے یہاں پر جو شخص جو کہے گا وہ سچ ہو گا انہوں نے کہا کہ میری عوام سے گزارش ہے کہ وہ ان کھلی کچہریوں میں پولیس کی تعریف و توصیف نہ کریں کیوں کہ جن کھلی کچہریوں میں پولیس کی تعریف ہوتی ہے وہ عوام مسائل کے حل کے حوالے سے نتیجہ خیز اور ثمر آور نہیں ہوتیں،انہوں نے کہا کہ اس کھلی کچہری میں جو درخواستیں پیش ہوں گی ان پر قانون کے مطابق کارروائی کے لئے احکامات تو جاری ہونا ہی ہیں لیکن میں نے ایک میکنزم اور سسٹم بنایا ہے جس کے تحت ہر درخواست پر قانونی کارروائی کے حوالے سے وقت کا تعین کیا جائے گا جس کے بعد ان درخواستوں پر ہونے والی قانونی کارروائی کا مکمل فالو اپ لیا جائے گا اور یہ فالو اپ میں خود لوں گا ،جس پولیس آفیسر نے قابل دست اندازی پولیس جرم پر قانونی کارروائی نہ کی تو اس کے خلاف سخت محکمانہ احتساب ہو گا،ڈی پی او نے کہا کہ انصاف فراہم کرنے میں تاخیر انصاف سے انکار کے مترادف ہوتا ہے،تاخیری حربے گناہ گار کو بے گناہ اور بے گناہ کو گناہ گار بنا دیتی ہیں ایسا رویہ اوکاڑہ پولیس میں ناقابل برداشت ہو گا ،فیصل شہزاد نے کہا کہ میرے دفتر سمیت ضلع بھر کے تمام پولیس دفاتر اور تھانوں میں اپون ڈور پالیسی چل رہی ہے جو شخص جب چاہے میرے سمیت ہر پولیس آفیسر سے مل کر اپنا مسئلہ بیان کر سکتا ہے اس کے مسئلے پر قانونی کے مطابق ہر صورت کارروائی ہو گی ٭

یہ بھی پڑھیں  شہریار خان نے یونس خان کو ون ڈے ٹیم میں شامل کرنے کی منظوری دیدی

یہ بھی پڑھیے :

What is your opinion on this news?

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker