علاقائی

عطائی ڈاکٹراوردایہ کے خلاف زبچہ بچہ کی ہلاکت کا مقدمہ درج

اوکاڑہ ﴿نمائندہ خصوصی﴾ ملگدہ چوک اوکاڑہ میں عطائی ڈاکٹر اور دایہ کے ہاتھوں ڈلیوری کیس کے دوران زچہ وبچہ کی ہلاکت کا مقدمہ قتل کی دفعہ کے تحت در ج کرلیا گیا ۔وزیراعلیٰ پنجاب نے واقعہ کی رپورٹ طلب کرتے ہوئے عطائی ڈاکٹروں کے خلاف آپریشن کا حکم دے دیا۔تفصیلات کے مطابق ملگدہ چوک اوکاڑہ میں گزشتہ روز نجی میٹرینٹی کلینک پر ڈلیوری کیس کے دوران ایک خاتون شازیہ بی بی اور اس کی نو مولود بچی ہلاک ہو گئی ماں بیٹی کی ہلاکت کا مقدمہ قتل کی دفعہ 302 ت پ کے تحت تھانہ شاہ بھور میں ڈپٹی ڈسٹرکٹ آفیسر ہیلتھ شاہد فاروق کی مدعیت میں عطائی ڈاکٹر ظفر اور دایہ ریاض بیگم کے خلاف درج کرلیاگیا ۔پولیس ملزمان کی گرفتاری کے لیے چھاپے مار رہی ہے ادھر وزیراعلیٰ پنجاب میاںشہباز شریف نے واقعہ کا سخت نوٹس لیتے ہوئے تحقیقات کے لیے خصوصی ٹیم کو اوکاڑہ بھجواتے ہوئے ان سے تحریری رپورٹ طلب کرلی جبکہ ذرائع کے مطابق وزیراعلیٰ نے حکم دیا کہ عطائی ڈاکٹروں کے خلاف منظم آپریشن کرتے ہوئے انہیں قانون کے مطابق سزا دی جائے تاکہ عطائی ڈاکٹروں کے ہاتھوں انسانی جانوں کے ضیاع کو بچایا جاسکے یہ امر قابل ذکر ہے کہ ملزم ظفر ہومیو ڈاکٹر کی حیثیت سے کلینک چلاتا ہے جس نے ڈلیوری آپریشن کرکے دو انسانی جانیں لیں۔

یہ بھی پڑھیں  کوہاٹ:عیدالفطر کے حوالے سے تینوں اضلاع کیلئے سیکورٹی پلان تشکیل دیدیا گیا

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker