پاکستانتازہ ترین

ینگ ڈاکٹرز کے اجلاس پر پولیس کا چھاپہ 18گرفتار

لاہور (نمائندہ  خصوصی ) لاہور سروسز  ہسپتال  میں ینگ  ڈاکٹرز ایسو سی  ایشن  کے  ارکان   کے اجلاس کے دوران پولیس نے چھاپہ مار کر اٹھارہ ڈاکٹروں کو گرفتار کرلیا ہے جن میں ینگ ڈاکٹر ز ایسوسی ایشن کے عہدیداران بھی شامل ہیں ۔ دوسری طرف پنجاب حکومت نے احتجاج کے توڑ کے لئے فوجی ڈاکٹرز کی خدمات حاصل کرلی ہیں جو آج سے اپنی ذمے داریاں سنبھالناشروع کردیں گے ۔ پنجاب حکومت نے بیس سے زائد ڈاکٹروں کو معطل کردیا ہے ۔ پنجاب حکلومت کا کہنا ہے کہ احتجاج پر اکسانے والے تمام ڈاکٹروں کو فارغ کیا جائے گا۔ ینگ ڈاکٹرز نے دھمکی دی ہے کہ پولیس کی جانب سے کی جانے والی کارروائی کا وہ کل بھر پور جواب دیں گے ۔ ذرائع کے مطابق پولیس دروازہ توڑ کر داخل ہوئی تھی تاہم کئی ڈاکتر بچ نکلنے میں کامیاب ہو گئے ۔پنجاب میں جاری ینگ ڈاکٹرز کی ہڑتال پر۔ ینگ ڈاکٹرزاور حکومت پنجاب کےدرمیان مذاکرات کاتیسرادوربھی ناکام ہوگیاجس کی وجہ سےڈیڈلاک تاحال برقرارہے۔ قبل ازیں مذاکرات کے تیسرے دور میں ینگ ڈاکٹرزکی قیادت نےاپنےمطالبات کی فہرست سینیئرڈاکٹرز کے حوالے کردی تھی اور کہاتھا کہ وہ حکومت کے ساتھ کم سے کم نقطے پر راضی ہونے کو تیار ہیں اور اگرمطالبات تسلیم کرلیےگئےتووہ ہڑتال ختم کرنے کےلیے بھی تیارہیں

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker