شہ سرخیاں
بنیادی صفحہ / تازہ ترین / قصور:پولیس کی بنیا دی ذمہ داری جرائم کی بیخ کنی ،امن وامان کا قیام اور مقدمات کی تفتیش ہے، ڈی پی او

قصور:پولیس کی بنیا دی ذمہ داری جرائم کی بیخ کنی ،امن وامان کا قیام اور مقدمات کی تفتیش ہے، ڈی پی او

قصور(حافظ جاویدالرحمن سے ) ڈی پی اوقصور جواد قمرنے کہا کہ پولیس کی بنیا دی ذمہ داری جرائم کی بیخ کنی ،امن وامان کا قیام اور مقدمات کی تفتیش ہے اور ایس ایچ او تھانہ کے انتظامی امور کے علاوہ فریقین کے مابین انصاف فراہم کرنے اور اپنے ماتحت عملہ سے انصاف فراہم کروانابھی اس کی ذمہ داری میں شامل ہے اس لیے ایس ایچ او کا فرض ہے کہ وہ تمام موصولہ احکامات پر ضابطہ کے مطابق قانونی کاروائی کریں کیونکہ کسی مظلوم سے زیادتی ہرگز برداشت نہیں کی جائے گی۔ ایس ایچ اوز کے سا تھ ساتھ محرر تھانہ کی بھی ذمہ داری ہے کہ وہ مو صو لہ احکاما ت کو بخوبی سمجھ کر ان پر سخت ایکشن تجویز کریں اور سمنات وارنٹ کی اصالتاً تعمیل کویقینی بنائیں ۔ان خیالات کا اظہار ڈسٹر کٹ پولیس آفیسر قصور نے گزشتہ روز ڈسٹرکٹ پولیس لائن قصور میں معزز اعلیٰ عدالتوں میں پیشی کے وقت ملزمان کو قرار واقعی سزا دلوانے اور پولیس کا اچھا تاثر قائم کرنے کے سلسلہ میں ایس ڈی پی اوز ،ایس ایچ اوز اور محرران تھانہ جات کے دو روزہ تربیتی کورس میں کیا ۔اس موقع پر ڈی پی او قصور نے مزید کہا کہ جب پولیس افسران معزز اعلیٰ عدالتوں میں جائیں توپوری پولیس فائل کا اچھی طرح مطالعہ کریں اور اچھے ٹرن آؤٹ کا مظاہرہ کریں تاکہ پولیس افسر کا اچھا تاثر قائم ہو سکے اور ملزمان کو قرار واقعی سزا دلوائی جا سکے ۔انہو ں نے مزیدتمام ایس ایچ اوز کو ہدایت کی مجرمان اشتہاریوں کے خلاف شروع کی گئی خصو صی مہم کو مزید فعال بنائیں اور ان جلد ازجلد گرفتار کریں اور ایسے مقدمات جن میں ملزمان مفرور ہیں اورعرصہ دراز سے زیر تفتیش چلے آرہے ہیں ان مقدمات میں ملوث ملزمان کو اندر تین یوم گرفتار کر کے مقدمات کو یکسو کریں اور ہر زیر تفتیش مقدمہ اور اس میں اشتہاری ملزم کے بارے میں متعلقہ تفتیشی افسر مجھے جوابدہ ہو گا کہ اس نے ابھی تک اس میں کیا کو شش کی ہے۔کو تاہی کی صورت میں سخت محکمانہ سزا دی جا ئے گی۔بعدازاں ڈی پی او قصورنے پولیس ملازمان کے مسائل بھی سنے۔

یہ بھی پڑھیں  دوران گشت 2افراد سے چرس،ناجائز اسلحہ برآمد جبکہ ایک اشتہاری کو گرفتار، سرکل پولیس