پاکستانتازہ ترین

پیپلزپارٹی پنجاب کے رہنما قاسم ضیاء گرفتار

لاہور(نمائندہ خصوصی) نیب نے کروڑوں روپے کی مالی بے ضابطگیوں کے الزام میں پیپلز پارٹی پنجاب کے رہنما اور پاکستان ہاکی فیڈریشن کے سابق صدر قاسم ضیاء کو گرفتار کر لیا ہے۔قاسم ضیاء نے بطور ڈائریکٹر علی عثمان سیکیورٹی لوگوں سے سرمایہ لگانے کے لئے 8 سے 10 کروڑ روپے لئے لیکن انھیں عوام کو شیئرز فراہم کئے گئے اور نہ ہی ان کی رقم انھیں واپس کی گئی، عوام کی جانب سے مسلسل شکایات پر لاہور اسٹاک ایکسچینج نے اس کی شکایت نیب کو کی جس پر نیب پنجاب نے کارروائی کرتے ہوئے قاسم ضیاء کو گرفتار کر لیا۔ نیب نے مالی بے ضابطگیوں کی تحقیقات کے لئے قاسم ضیاء کا 14 روزہ جسمانی ریمانڈ بھی حاصل کر لیا ہے۔ اس کے علاوہ قاسم ضیاء کے دور صدارت میں پاکستان ہاکی فیڈریشن میں ڈیڑھ ارب روپے کے آڈٹ میں بھی تقریبا 70 کروڑ روپے کی مالی بے ضابطگیوں کا انکشاف ہوا جس کے باعث حکومت نے فیڈریشن کی گرانٹ روک لی تھی۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ مالی بے ضابگیوں کے الزام میں ایچ ایف کے سابق سیکرٹری آصف باجوہ کی گرفتاری کا بھی امکان ہے۔واضح رہے کہ قاسم ضیاء 1980 سے 1987 تک قومی ہاکی ٹیم کا حصہ رہے اور 2008 سے 2013 تک پی ایچ ایف کے صدر بھی رہے۔ اس کے علاوہ قاسم ضیاء پیپلز پارٹی کے ٹکٹ پر ایم پی اے بھی رہ چکے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں  پی ٹی آئی کا 12 مئی کو کراچی میں جلسے کا اعلان

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker