بین الاقوامیتازہ ترین

بنگلہ دیش نے فیس بک پر توہین رسالت کرنے والے طلبا کو گرفتارکر لیا

ڈھاکہ(مانیٹرنگ سیل) ایک ہجوم کی طرف سے جن دو طلبا پر فیس بک پر توہین رسالت کرنے کے الزامات لگائے جانے پر حملہ کیا گیا تھا انہیں چٹاگانگ میں گرفتار کر لیا گیا ہے۔ یہ بات پولیس نے منگل (یکم اپریل) کو بتائی۔ پولیس نے دو اٹھارہ سالہ طلبا پر انفرمیشن کمیونیکیشنز ٹیکنالوجی (آئی سی ٹی) قوانین کے تحت ابتدائی الزامات لگائے ہیں۔ اس سے پہلے تفتیش کاروں کو ان کے فیس بک کے صحفات پر مذہب مخالف تبصرے ملے تھے۔ یہ بات مقامی پولیس چیف عتیق احمد چوہدری نے بتائی۔ انہوں نے مزید کہا کہ "ہمارے افسران نے انہیں مشتعل طلبا کے ایک ہجوم کے چنگل سے بچایا جو انہیں اتوار کو چٹاگانگ کے کالج میں مار پیٹ رہا تھا”۔ چٹاگانگ پولیس کے ڈپٹی کمشنر ریاض المعسود نے کہا کہ اگر انہیں مجرم پایا گیا تو انہیں زیادہ سے زیادہ چودہ سال کی سزا مل سکتی ہے اور تقریبا دس ملین ٹکے ( 129,000 ڈالر) کا جرمانہ ہو سکتا ہے۔ وکیل دفاع ابوبکر صدیقی اعظم نے ڈھاکہ ٹریبیون کو بتایا کہ اس کے موکلوں نے ان الزامات کو مسترد کیا ہے اور کہا ہے کہ "انہوں نے کوئی ایسی بات کھلے عام نہیں لکھی ہے جس سے کسی بھی دوسرے شخص کے مذہبی عقائد کو ٹھیس پہنچتی ہو”۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button