تازہ ترینعلاقائی

مرضی کیخلاف فیصلہ دینے پر وکیل نے جج کی جوتے سے تواضع کردی

فیصل آباد (بیوروچیف) فیصل آباد میں مقدمے کے فیصلے پر مشتعل وکیل نے فاضل جج پر جوتے سے حملہ کر دیا۔ ناراض ججوں نے کام چھوڑ دیا جس سے عدالت آنے والوں کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔ فیصل آباد بار نے واقعہ کے ذمہ دار ایڈووکیٹ چوہدری مقصود کی رکنیت معطل کر دی ہے۔ سیاست دانوں پر جوتے پھینکنے کی غلط روایت عراق سے چلی تو پھر کیا بھارت اور کیا برطانیہ سب ہی جگہ  جوتے چل گئے ۔۔ جوتا کسی پر بھی پھینکا جائے خلاف تہذیب ہے اور اگر یہ حرکت کوئی وکیل عدالت میں کرے تو اس سے بڑی بدتمیزی تو ہو نہیں سکتی۔ ایسا کچھ ہوا فیصل آباد میں جب ایڈیشنل سیشن جج اسد علی کی عدالت میں فیصلے پر مشتعل وکیل چوہدری مقصود ایڈووکیٹ نے فاضل جج پر جوتے سے حملہ کر دیا۔ عدالت کے ججوں کی ناراضی فطری تھی سو انہوں نے کام چھوڑ دیا۔ غلطی تو وکیل کی تھی لیکن سزا بے چاروں سائلوں کو ملی اور دور دراز سے انصاف کی آس لئے شدید گرمی میں عدالتوں کا رخ کرنے والے مارے مارے پھرتے رہے۔ فیصل آباد بار ایسوسی ایشن نے صورت حال کا فوری نوٹس لیا اور واقعہ کے ذمہ دار وکیل چوہدری مقصود کی رکنیت معطل کردی۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker