تازہ ترینعلاقائی

سنجھورو:آباد گاروں کا FDS﴿فرینڈز ڈس ایبل سو سائیٹی﴾ NGOs کے خلاف احتجاج

سنجھورو ﴿نامہ نگار﴾آباد گاروں کا FDS﴿فرینڈز ڈس ایبل سو سائیٹی﴾ NGOs کے خلاف احتجاج ۔آباد گاروں کو امداد کا جھانسا دے کر لاکھوں روپے لوٹ لئے۔سیلاب سے تباہ حال آباد گار تا حال امداد کے منتظر۔
تفصیلات کے مطابق تعلقہ سنجھورو کے آباد گاروں اختر،جاوید،شاہداور دیگرکی قیادت میں نیشنل پریس کلب سنجھورو میں الیکٹرانک وپرنٹ میڈیا کو اپنا احتجاج ریکارڈ کراتے ہوئے بتایا کہ FDS﴿فرینڈز ڈس ایبل سوسائیٹی﴾ نے ضلع بھر کے آباد گاروں سے فی فارم 3000﴿تین ہزار﴾ روپے لے کر امداد کے لئے فارم بھرے تھے اور ان سے وعدہ کیا تھا کہ ہر فارم پر40کلو گرام کپاس کابیج ، زرعی ادویات اور 2بوری کھاد کی مفت میں دی جائیں گی۔جبکہ اس NGOs نے آباد کاروں کے ساتھ فراڈ کیا ہے اور 40کلوکپاس کے بیج کے بجائے صرف 15 کلو بیج باد گاروں کو فراہم کرکے منظر سے غائب ہو گئی ہے۔آباد گاروں نے بتایا کہ ضلع سانگھڑ کے مقامی آرگنائزر اخلاق احمدکی مدد سے میڈم علیشاہ اور عبداللہ نامی شخص جو کہ اس تیظیم کے سربراہ ہیں نے مل کر آباد گاروں سے لاکھوں روپے کا فراڈ کیا ہے اور آباد گاروں کو وعدے کے مطابق نہ تو کپاس کا بیج دیا گیا اور نہ ہی دیگر زرعی ادویات اور کھاد دی گئی ہے۔دوسری طرف جب FDS﴿فرینڈز ڈس ایبل سو سائیٹی﴾ NGOs کی سربراہ سے فون پر رابطہ کیا گیا تو انھوں نے کوئی تسلی بخش جوب دئیے بغیر اپنا فون بند کر دیا۔آباد گاروں کے مطابق اس تنظیم نے ضلع بھر میں 5000سے ذائد فارم تقسیم کئے تھے جن کی مالیت 1500000﴿ڈیڑھ کروڑ ﴾ سے ذائد ہے فراڈکے زریعے آبادگاروں سے امداد کو جھانسہ دے کر لوٹ کر فرار ہو گئی ہے۔
واضع رہے کہ گزشتہ سال سیلاب کے تباہ کاریوں کے بعد حکومتِ سندھ کے ساتھ ساتھ ملکی اور غیر ملکی NGOs نے ضلع سانگھڑکے علاقے کی تباہ حال عوام کی زندگی کی دوبارہ بحالی کے لئے اقدامات کئے تھے جو قابلِ ستائش تھے۔ لیکن ان سب کے باوجود کچھ عناصر ایسے بھی تھے جنھوں نے اس موقعے کا فائدہ حاصل کیا اور عوام کو مختلف بہانوں سے لوٹا،اور مقامی وڈیروں سے مل کر جعلی شناختی کارڈ ریکارڈ میں دیکھا کر سامان ہڑپ کیا اب جبکہ یہ سامان جس میں بیلچے، کسولے، ہاتھ کی ٹرالیاں اود دیگر سامان شامل ہے کباڑی کی دوکانوں پر بیچا جا رہا ہے۔ FDS﴿فرینڈز ڈس ایبل سو سائیٹی﴾ بھی ان ہی میں سے ایک تھی جس نے ضلع سانگھڑمیں آباد گاروں کو سہانے خواب دیکھائے اور آباد گاروں کو زرعی امداد کرنے کے بہانے لوٹ کر فرار ہو گئی ہے۔ آباد گاروں نے حکومتِ سندھ، شوشل ویلفئیر کے حکام ملکی اعلیٰ عدالتوں سے اپیل کی ہے کہ FDS ﴿فرینڈز ڈس ایبل سو سائیٹی﴾ NGOs کے خلاف پابندی لگائی جائے اور اس تنظیم کو انصاف کے کٹہرے میں لایا کر آباد گاروں سے ہتھیائی گئی رقم واپس دلائی جائے تاکہ تباہ حال کسانوں اور آباد گاروں کے ساتھ ہونے والی نا انسافی کا ازالہ ہو سکے۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button