پاکستانتازہ ترین

زرمبادلہ کے ذخائر تیرہ ارب ڈالر کی سطح سے نیچے آگئے

karachi-imageپاکستان(مانیٹرینگ سیل) کے زرمبادلہ کے ذخائر تین سال سات ماہ کے بعد ایک بار پھر تیرہ ارب ڈالر کی سطح سے نیچے آگئے۔ ایک ہفتے میں مزید اڑتیس کروڑ ڈالرزکی کمی ہوئی۔ اسٹیٹ بینک کہتا ہے کہ زرمبادلہ کے ذخائر میں کمی آئی ایم ایف کو ادائیگیوں کے باعث آئی۔ اسٹیٹ بینک کے مطابق یکم مارچ کو ملکی زرمبادلہ کے ذخائر میں ارٹیس کروڑڈالرزکی کمی واقع ہوئی جس سے اِن کا مجموعی حجم بارہ ارب،80کروڑ سینتالیس لاکھ ڈالررہ گیا ہے۔ اس سے قبل زرمبادلہ کے ذخائر کی یہ سطح اکیس اگست دو ہزار نو میں ریکارڈ کی گئی تھی۔ پاکستان نے گیارہ اور چھبیس فروری کو دو قسطوں میں آئی ایم ایف کو پچپن کروڑ ڈالر کے قریب قرض واپس کیا تھاجس کے باعث ملکی زرمبادلہ کے ذخائرتیرہ ارب ڈالر کی سطح سے بھی نیچے آگئے ہیں۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button