تازہ ترینعلاقائی

لاہور: جوتا فیکٹری میں آگ لگنے سے 23 افراد جاں بحق متعدد زخمی

لاہور(مانیٹرنگ سیل)لاہور کے علاقے بند روڈ میں جوتے بنانے کی فیکٹری میں آتشزدگی سے 23 افراد جھلس کر جاں بحق جبکہ درجن سے زائد شدید زخمی ہو گئے ہیں،عینی شاہدین کے مطابق فیکٹری کا جنریٹر پھٹنے سے آگ لگی۔جوتوں کے سول بنانے والی فیکٹری میں آتش زدگی کا واقعہ بند روڈ کی گنجان آبادی میں پیش آیا ،فیکٹری میں 35 سے 40 افراد کام کر رہے تھے کہ اچانک آگ بھڑک اٹھی۔کیمیکل اور پلاسٹک دانے کے باعث آگ تیزی سے پھیلتی چلی گئی اور دیکھتے ہی دیکھتے فیکٹری کی دو منزلہ عمارت کولپیٹ میں لے لیا،ریسکیو ٹیمیں اور فائربریگیڈ کی دس گاڑیاں فوری طور پر جائے وقوعہ پہنچ گئیں۔تنگ گلیوں کے باعث امدادی کارروائیوں میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔شدید آگ کے باعث فیکٹری میں پھنسے افراد کو فیکٹری کی دیواریں اور شیشے توڑ کر زخمیوں کو نکالا گیا ،امدادی کارروائیوں کے دوران دو ریسکیو اہلکار بھی زخمی ہو گئے۔ اسپتال ذرائع کے مطابق واقعے میں 23افراد جھلس کر ہلاک جبکہ بیس سے زائد شدید زخمی ہو گئے، 20 لاشیں میواسپتال جبکہ 3 میاں منشی اسپتال لائی گئیں،ہلاک ہونیوالوں میں فیکٹری مالک رجب بھی شامل ہے،ڈی سی او لاہور نورالامین مینگل نے سانحے میں 23ہلاکتوں کی تصدیق کی ہے، انہوں نے بتایا کہ فیکٹری کا جنریٹر پھٹنے سے آگ لگی۔ وزیراعلیٰ شہباز شریف نے جاں بحق ہونیوالوں کیلئے 3،3 لاکھ روپے مالی امداد کا اعلان کیا ہے جبکہانکوائری کیلئے چیئرمین وزیراعلیٰ معائنہ ٹیم کی سربراہی میں کمیٹی تشکیل دے دی گئی۔

یہ بھی پڑھیں  پی ڈی ایم نے کورونا کے باعث کراچی میں ہونیوالا جلسہ موخر کردیا

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker