بین الاقوامیتازہ ترین

امریکی حکومت نے ’گولیوں‘ کے ذریعے ٹیکے کی جگہ کورونا کا علاج کرنے کی منظوری دے دی

لندن(ڈیسک رپورٹر)امریکی حکومت نے ’گولیوں‘ کے ذریعے ٹیکے کی جگہ کورونا کا علاج کرنے کی منظوری دے دی ۔فائزر کی گولیوں کو وبا سے تحفظ کے لیے 90 فیصد اثر انداز قرار دے دیا۔تفصیلات کے مطابق غیر ملکی میڈیا کی رپو رٹ میں کہا گیا ہے کہ امریکی ادارے ’فوڈ اینڈ ڈرگ ایڈمنسٹریشن‘ (ایف ڈی اے) نے 22 دسمبر کو فائزر کی گولیوں ’پیکسلووڈ‘ (Paxlovid) کو ہنگامی بنیادوں پر 12 سال سے زائد عمر افراد کے لیے استعمال کرنے کی اجازت دی۔امریکی حکومت نے ایک ایسے وقت میں مذکورہ گولیوں کے استعمال کی اجازت دی ہے جب کہ وہاں کورونا کی نئی قسم ’اومیکرون‘ کے پیش نظر سخت حفاظتی اقدامات کا اعلان کیا گیا ہے۔یہ  گولیاں 12 سال سے زائد اور 18 سال سے کم عمر افراد کو ان کے وزن کے حساب سے دی جائیں گی جب کہ بالغ افراد کو ہر 12 گھنٹے میں ایک خوراک دی جائے گی۔یاد رہے کہ فائزر کے علاوہ امریکی کمپنیوں مرک اور ریجبیک بائیو تھراپیوٹیکس نے بھی اپنی گولیوں کے استعمال کے لیے امریکی حکومت کو درخواست دی تھی، تاہم اس پر تاحال کوئی فیصلہ نہیں ہو سکا۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button