تازہ ترینکالم

چند گھڑیاں ایف ایم نائنٹی فائیو پنجاب رنگ اسٹوڈیو میں

faisal shamiہیلو میرے پارے پارے دوستو سنائیں کیسے ہیں امید ہے کہ اچھے ہی ہونگے اور یقیناًدوستوں آپ کی عید بھی نہایت اچھی گزری ہو گی ،، اور ننھے منے دوستوں نے تو خوب انجوائے کیا ہو گا ، خوب ڈھیر ساری عیدی بھی اکٹھی کی ہو گی ، خوب ہلہ گلہ بھی کیا ہو گا ، رنگ برنگے کپڑے پہن کر نت نئے رنگ برنگے پکوانوں سے بھی لطف اندوز ہوئے ہو ں گے ،،
جی ہاں دوستوں اور یقیناًہماری عید بھی بہت اچھی گزری ،،، ہم نے بھی خوب مزے کئے ،
بہر حال دوستوں یقیناًخوشی کی بات تو یہ بھی ہی کہ عید پر ملک بھر میں امن و امان رہا اور یقیناًملک بھر میں امن و امان قائم رکھنے کا سہرا وزیر اعظم پاکستان اور ربراہ پاک فوج کے سر بھی جا تا ہے ،
جی ہاں ، ایک طویل عرصے کے بعد ملک بھر کے شہریوں نے بے خوفی سے بغیر کسی ڈر و خوف کے عیدمنائی،
بہر حال دوستوں ہم آپ سے کچھ دل کی باتیں بھی کہنا چاہ رہے تھے اور دل کی باتیں کیا ہے بس ایک خوبصورت ملاقات کا قصہ ہے جو ہم آپ سے بھی شئیر کر نا چاہتے ہیں ، جی ہاں دوستوں بتلاتے چلیں کہ ایف ایم نائنٹی فائیو پنجاب رنگ پنجابی زبان کا منفرد و خوبصورت چینل ہے جو اپنی انفرادیت کے باعث بچوں بڑوں،خواتین میں بھی مقبول عام ہے ، اور گزشتہ دنوں ہمیں بھی ایف ایم نائنٹی فائیو کے معروف پروگرام بابے دینے دا ڈیرہ میں شرکت کا موقع ملا، جی ہاں پنجابی کے معروف پروگرام کے میزبان معروف وکیل اور شاعر جناب محمود الحسن گیلانی ہیں اور میری یقیناًان سے پہلی ملاقات تھی ، تاہم بتلاتے چلیں کے پروگرام میں ہمارے ساتھ مجتبیٰ رفیق بھی شامل تھے۔ مجتبیٰ رفیق کے اصرار پر ہی میں نے نہ صرف پروگرام میں شرکت کی حامی بھر لی بلکہ پروگرام میں بھر پور طریقے سے شامل بھی ہوئے ،
جی ہاں پروگرام کا وقت پانج بجے تھا لیکن بعد میں ساڑھے پانچ بجے کردیا گیا ، تاہم محترم گیلانی صاحب جب اسٹوڈیو پہنچے تو پروگرام کا وقت شروع ہونے کو میں اور مجتبیٰ مقررہ وقت سے پہلے ہی پنجاب رنگ ایف ایم نائنٹی فائیو کے اسٹوڈیو میں موجود تھے ،جناب محمود الحسن گیلانی صاحب نے پروگرام کا آغاز کیا اور باقاعدہ ہمار ا تعار ف کروایا ، پروگرام کے دوران جناب سید محمود گیلانی ناظرین سے بھی مخاطب تھے اور ساتھ ساتھ دونوں مہمانوں سے بھی بات چیت جاری تھی ، تاہم دوران گفتگو ہی معلوم ہوا کہ جب مجتبی ٰ نے یوم تکبیر کا نام تجویز کیا تو اسکی عمر آٹھ سے دس سال تھی اور آج وہ پچیس جھبیس سال کا نوجوان ہے، تاہم پروگرام کے میز بان جناب محمود الحسن گیلانی نے ہلکے پھلکے سوالوں کی بوچھاڑ ہم پر بھی کر دی تھی ، تاہم پروگرام کے دور ان جناب محمودالحسن گیلانی ناظرین کو پروگرام کا وقت بھی بتاتے جا رہے تھے اور پروگرام کے دوران لاتعداد پیغامات بھی موصول ہوئے جو کہ لاہور سے اور لاہور کے باہرسے تھے تاہم پیغامات بھیجنے والوں میں اکثر یت خواتین کی تھی ، بہر حال دوران پروگرام چھوٹے چھوٹے سوالات کے جوابات دے کے ہمارا حوصلہ بھی بڑھا تاہم سٹوڈیو میں بیٹھ کر گھبراہٹ ہو رہی لیکن چند ہی لمحوں میں جناب گیلانی کی دلچسپ گفتگو نے گھبراہٹ ختم کر دی۔مجھے یہ دیکھ کر انتہائی حیرت ہوئی کہ جناب گیلانی پروگرام بھی کر رہے تھے اور اور ساتھ ساتھ از خود ساؤنڈ سسٹم بھی خود ہی آپریٹ کر رہے تھے، اور میرے لئے یہ بات انتہائی حیران کن تھی کہ ریڈیو چینل پر اینکر ازخود اپنی آواز ساؤنڈ سسٹم پر کنٹرول کر رہا ہے،
بہر حال میرا کسی بھی ریڈیو لائیو شو میں پہلا تجربہ تھا جو کہ خاصا خوشگوار رہا اور جناب گیلانی موصوف کی خوبصورت مسحور کن آواز اور گفتگو کے جادو کا اس قدر اثر دلوں پر ہوا کہ پروگرام کے وقت ختم ہو نے کا پتہ ہی نہ چلا ، تاہم دوران گفتگو مجتبیٰ نے سامعین کو بتایا کہ محمد علی رانا ،عقیل خان اور فیصل شامی کے ساتھ مل کر معاشرے کی آواز ماہنامہ میگزین نکالنے کی تیاریاں بھی کر رہے ہیں ،
بہرحال ہنستے مسکراتے پروگرام کا وقت ختم ہوا اور جناب گیلانی کے ساتھ ساتھ ہم بھی سامعین کو الوداع کہہ کر جناب گیلانی صاحب کے ہمراہ اسٹوڈیو سے باہر نکلے تاہم بتلاتے چلیں کہ جناب گیلانی ڈپٹی اٹارنی جنرل بھی ہیں اور انتہائی پر کشش اور مسحور کن شخصیت جو کسی بھی انجان کو اپنی طرف کھنچتی چلی جاتی ہے تاہم پروگرام کے بعد باہر گراؤنڈ میں جناب گیلانی صاحب ہمارے ساتھ تصویریں بنوا تے رہے ،تاہم افطاری کا وقت قریب تھا اس لئے ہم نے اور مجتبیٰ رفیق نے جناب گیلانی محترم سے اجازت چاہی اور مجتبی کے ہمراہ گاڑی میں بیٹھنے لگے تاکہ میں مجتبی کو ڈراپ کر دوں ، تاہم واپسی پر بھی میرے ذہن میں جناب گیلانی کی خوبصورت باتوں کی چاشنی چھائی ہوئی تھی ۔ بہر حال اب آگے مزید کیا کہیں فی الوقت اجازت چاہتے ہیں آپ سے تو ملتے ہیں دوستوں جلد آپ سے ایک بریک کے بعد تو چلتے چلتے اللہ نگھبان رب راکھا

یہ بھی پڑھیں  ڈیمز فنڈمیں ایک ارب 58کروڑ سے زائد رقم جمع

note

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker