پاکستانتازہ ترین

سپریم کورٹ نے وزیراعظم گیلانی کی چھٹی کرادی

اسلام آباد( بیوروچیف) سپریم کورٹ نے یوسف رضا گیلانی کو وزارت عظمیٰ کیلئے نااہل قرار دے دیا ہے۔ وہ قومی اسمبلی کی رکن بھی نہیں رہے۔اسپیکر رولنگ کیس میں چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے مختصر فیصلہ سنایا۔ چار صفحات پر مشتمل مختصر فیصلے میں سپریم کورٹ نے حکم دیا ہے کہ یوسف رضا گیلانی وزارت عظمیٰ کیلئے اہل نہیں، پاکستان کی وزارت عظمیٰ کا عہدہ خالی ہوگیا ہے۔ وزارت عظمیٰ کی نااہلیت کے بعد یوسف رضا گیلانی قومی اسمبلی کے رکن بھی نہیں رہے۔ سپریم کورٹ نے الیکشن کمیشن کو چھبیس اپریل سے وزیراعظم کی نااہلی کا نوٹیفکشن جاری کرنے کی ہدایت کی ۔ فیصلے میں کہا گیا ہے کہ صدر مملکت نئے وزیر اعظم کے انتخاب کیلئے اقدامات کریں۔ سپریم کورٹ میں سماعت کے دوران اٹارنی جنرل اور عمران خان کے وکیل حامد خان نے دلائل دئیے۔ حامد خان کا کہنا تھا اسپیکر ڈاک خانہ نہیں، اسپیکر کسی بھی معاملے میں اپنا مائنڈ اپلائی کرسکتی ہیں۔ چیف جسٹس نے پوچھا کہ سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد الیکشن کمیشن اور اسپیکر کا کیا کردار ہے، کیا معاملہ واپس اسپیکر کو بھیجا جاسکتا ہے۔ حامد خان نے کہا معاملہ واپس نہیں بھیجا جاسکتا۔ سزا کے بعد نااہلیت کا اطلاق خود بخود ہوجاتا ہے۔ چیف جسٹس نے ریمارکس دئیے کہ اسپیکر کو سپریم کورٹ کے فیصلے پر اپنا فیصلہ دینے کا اختیار نہیں۔ وزیراعظم کو فیصلے کے خلاف اپیل کرنی چاہیئے تھی۔ اٹارنی جنرل نے اسپیکر کی رولنگ کے حق میں قومی اسمبلی میں منظور کی گئی قرارداد عدالت میں پیش کی۔ اُن کا کہنا تھا اسپیکر کی رولنگ عدالت میں چیلنج نہیں کی جاسکتی۔ لیکن پارلیمنٹ سپریم کورٹ کے فیصلے ختم کرسکتی ہے۔ اٹارنی جنرل نے عدالت سے درخواست کی اسمبلی میں قرارداد کی منظوری کے بعد اسپیکر رولنگ کے خلاف تمام درخواستیں مسترد کی جائیں۔

یہ بھی پڑھیں  اوکاڑہ : علامہ اقبال کا شاہین غیور، بلند پرواز ، تیزنگاہ ہے ۔علامہ اقبال نوجوانوں کو بھی ایسا ہی دیکھناچاہتے تھے ۔ محمدعتیق اسلم

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker