تازہ ترینعلاقائی

گوجرانوالہ: ری فلنگ پرانتظامیہ کےچھاپے ضلع بھرمیں ایل پی جی ڈیلرکی ہڑتال:صارفین خوار

گوجرانوالہ(مانٹیرنگ سیل) ری فلنگ کرنے پر ضلع کے سب سے بڑے ڈیلر سمیت4 ایل پی جی پوائنٹس سیل کرنے کیخلاف 300سے زائددکانوں کاشٹرڈائون،7ہزاررکشے ، اورچھوٹی ٹرانسپورٹ متاثر گھریلوصارفین کو بھی ایل پی جی کی سپلائی رک گئی،45کلووالاسلنڈرنہیں بیچ سکتے ،کیس عدالت میں ہے ،طارق محمود مغل،ری فلنگ غیرقانونی ہے ،مقدمات درج ہونگے ضلعی انتظامیہ کی جانب سے ایل پی جی کی ری فلنگ کرنے پر ضلع کے سب سے بڑے ڈیلر سمیت4 ایل پی جی پوائنٹس سیل کرنے کے خلاف ایل پی جی ایسوسی ایشن کی جانب سے شٹر ڈاؤن ہڑتال کر دی گئی۔تفصیلات کے مطابقگزشتہ روز اے سی سٹی صائمہ علی نے پولیس کی نفری کے ہمراہ کارروائی کرتے ہوئے ٹرسٹ پلازہ میں واقع ایل پی جی کے ڈیلر اور ایسو سی ایشن کے صدر طارق محمود مغل کی دکان سیل کر کے ری فلنگ کرنے پر ان کے ملازم اسماعیل خان کو حراست میں لے لیا جبکہ ضلعی انتظامیہ کی جانب سے مزید ایل پی جی پوائنٹس بھی سیل کئے گئے ،ضلعی انتظامیہ و پولیس کے مشترکہ آپریشن کے دوران دکانوں کو سیل کئے جانے اور پکڑ دھکڑ کے خوف سے پہلے تو ایل پی جی کی خریدو فروخت اور ری فلنگ کرنے والے دکانداروں نے کئی گھنٹے اپنی دکانیں بند رکھیں بعدازاں ایسوسی ایشن کی جانب سے شٹر ڈاؤن کا اعلان کر دیا گیا اور شام4بجے کے بعد شہریوں کو ایل پی جی کی فراہمی بھی بند ہو گئی۔ایل پی جی ڈیلرز کے مطابق سی این جی سٹیشنز کو تا حکم ثانی بند کئے جانے کے بعد مقامی روٹ پر گاڑیاں چلانے والے سیکڑوں ویگن،پک اپ مالکان اور نجی گاڑیوں کے مالکان نے ایل پی جی کا استعمال کر کے اپنا روزگار چلانا شروع کیا تھا جبکہ ضلع بھر میں 6سے 7ہزار رکشہ ڈرائیوروں کے گھروں کے چولہے جلنے کا تمام دارو مدار بھی ایل پی جی پر تھا اور یہ رکشہ ڈرائیور روزانہ5کلو گرام کا سلنڈر بھروا کر دن بھر اپنا کام چلاتے اور اپنے اہلخانہ کیلئے دیہاڑی بنا کر گھر جاتے تھے ۔ایل پی جی بند ہونے کی وجہ سے سوئی گیس سے محروم گھریلو صارفین کو بھی شدید پریشانی اٹھانا پڑے گی۔رابطہ کرنے پر ایل پی ایسوسی ایشن کے صدر طارق محمود مغل نے بتایا کہ انتظامیہ کا کہنا ہے کہ ریڈی میڈ سلنڈر خرید کر بیچے جائیں جبکہ کمپنیوں نے چھوٹے سلنڈر بنانے چھوڑ دیئے ہیں جس کی وجہ سے وہ45کلو گرام کا سلنڈر خرید کر گاہکوں کوکلو،ڈیڑھ کلو سے 2کلو تک ایل پی گیس فروخت کرتے ہیں ان کا کہنا تھا کہ اگر وہ صرف45کلو گرام والا ریڈی میڈ سلنڈر بیچیں اور ری فلنگ نہ کریں تو عام گھریلو صارف اور رکشہ ڈرائیور اپنا گزارا کیسے کریں گے ۔طارق مغل کے مطابق ان کا کیس ہائیکورٹ میں زیر سماعت ہے جس کی وجہ سے ان پر مقدمہ درج نہیں کیا جا سکتا جبکہ ضلعی انتظامیہ کا کہنا ہے کہ اس غیر قانونی فعل پر ان کے خلاف مقدمہ درج کروادیا گیا ہے ۔اے سی سٹی صائمہ علی نے دنیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ گوجرانوالہ میں ایل پی جی کی ری فلنگ جیسا خطرناک کاروبار ہر گز نہیں کرنے دیا جائے گا جس سے انسانی جان و مال کو خطرات لاحق ہوں، اے سی سٹی کے مطابق غیر قانونی ری فلنگ کرنے والے افراد کے خلاف سخت کارروائی جاری رہے گی۔ رکشہ چلانے والے آفتاب علی،روشن،شمشیر،شمس،سلطان و دیگر نے دنیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ ان کے رکشوں میں جوسلنڈر ہیں ان میں ساڑھے چار سے پانچ کلو گرام گیس ڈالی جاتی ہے جس سے وہ شہر کے مختلف روٹس پر سواریوں کو ان کی منزل پر چھوڑتے اور اپنا روزگار کماتے ہیں،رکشہ ڈرائیورز کا کہنا تھا کہ ان میں سے بیشتر دیہاڑی پر رکشہ چلاتے ہیں،سی این جی رکشہ ڈرائیورز کا کہنا تھا کہ جب سے سی این جی سٹیشنز بند ہوئے ہیں وہ بھی ایل پی جی بھروا کر اپنا روزگار چلا رہے ہیں اگر ایل پی جی کی فراہمی بند رہی تو وہ فاقوں پر مجبور ہو جائیں گے

یہ بھی پڑھیں  شاعراحمد فراز کودنیا سے رخصت ہوئے 12 برس بیت گئے

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker