بین الاقوامیتازہ ترین

دہلی اجتماعی زیادتی کے ملزمان کی سزائے موت برقرار

نئی دہلی(مانیٹرنگ سیل) اے ایف پی نے خبر دی ہے کہ ہائی کورٹ نے جمعرات (تیرہ مارچ) کو نئی دہلی کی ایک طالبہ سے ہونے والی ہلاکت خیز اجتماعی زیادتی پر گزشتہ سال سزا پانے والےملزمان کی سزائے موت کو قائم رکھا ہے۔ ان چاروں افراد کو دسمبر 2012 کے ہلاکت خیز واقع کے مقدمے میں فوری سماعت کے بعد گزشتہ سال ستمبر میں مجرم قرار دیا گیا تھا۔ ایک سزا یافتہ کم عمر لڑکے کو تین سال کے لیے قید کی سزا دی گئی تھی۔ چھٹے مبینہ حملہ آور کو جیل میں مردہ پایا گیا تھا. ان چار افراد کے وکیل اے پی سنگھ نے کہا کہ اب وہ ملک کی اعلی ترین عدالت میں اپیل کریں گے۔ انہوں نے اخباری نمائںدوں کو بتایا کہ "یہ سیاسی محرک پر کیا جانے والا فیصلہ ہے”۔ مظلومہ کی ماں نے اس فیصلے کا خیر مقدم کیا اور کہا کہ خاندان "انصاف کے قریب ہوتا جا رہا ہے”۔ انہوں نے عدالت کے باہر کہا کہ "مکمل انصاف اس وقت ہو گا جب تمام ملزمان کو پھانسی مل جائے گی۔ کم عمر مجرم کو بھی یہ ہی سزا ملنی چاہیے تھی”۔

یہ بھی پڑھیں  سبی:بلوچ کالعدم تحریک سے تعلق رکھنے والے 27افراد نےہتھیار ڈال دیے

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker