تازہ ترینعلاقائی

ہارون آباد:پرائمری تعلیمی ادارے لاوارث ہوگئے

haroon abadہا رو ن آباد(بیو رو چیف )ہا رو ن آ با د کے کئی پر ا ئمر ی سکو ل بنیا د ی سہو لتو ں سے محر و م ہیں بچو ں کے بیٹھنے کے لئے نہ تو ڈیسک ہیں اور نہ ہی پینے کے لئے صا ف پا نی مو جو د ہے ۔ جس کی وجہ بچے کھلے آسمان تلے بغیر کسی فرنیچر کے زمین پر بیٹھ کر تعلیم حاصل کر رہے ہیں ،کئ سکو لو ں کی چا ر دیو ا ر یا ں بھی نہیں جس کا فا ئد ہ لو گ ا ٹھا تے ہیں اور ا پنے مو یشی سکو لو ں میں با ند ھ د یتے ہیں جسں کی وجہ سے سے تعفن پھیلتا ہے ۔کو ڑ ا کر کٹ کے لئے بھی لو گ سکو لو ں کے گر ا و نڈ ا ستعما ل کر تے ہیں جو ا نتطا میہ کی کا ر گر د گی پر سو ا لیہ نشا ن ہے۔صفا ئی کا ا نتظا م بھی طلبا ء کو خو د کر نا پٹر تا ہے جس کی و جہ سے ا ن کا قمیتی ٹا ئم ضا ئع ہو تا ہے، دوسری جانب دیہاتیوں کا کہنا ہے کہ گرمی ہو یا سردی ہمارے بچے زمین پر بیٹھ کر سردی میں تعلیم حاصل کررہے ہیں حکومت دانش سکولوں پر لاکھوں روپے خرچ کرر ہی ہے لیکن ہمارے گاؤں کے سکول کی عمار تیں مکمل نہیں ہیں مکمل عما ر تیں نہ ہو نے کی وجہ ان کے بچے دور دراز سکول میں پڑھنے کے لئے جا رہے ہیں یہاں بچوں کیلئے کوئی باتھ روم بھی نہ ہے بچے باتھ روم میں جانے کیلئے اپنے اپنے گھروں میں جاتے ہیں اور گرمیوں میں شدید گرمی کی وجہ سے پینے کا پانی نہ ہونے کی وجہ سے گھروں سے پانی منگوانا پڑتا ہے اور بچے ساتھ جانوروں کے تعلیم حاصل کرنے پر مجبور ہیں

یہ بھی پڑھیں  ٹی 20 ورلڈکپ، پاکستان کا آسٹریلیا کو150کاٹارگٹ

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker