تازہ ترینعلاقائی

ہارون آباد:نہر میں تقریبا 80فٹ چوڑاشگاف پڑنےسے سینکڑوں ایکڑاراضی زیرآب

ہارون آباد ﴿بیو رو چیف﴾ نہر میں تقریبا 80فٹ چوڑا شگاف پڑنے سے سینکڑوں ایکڑ اراضی زیر آب ۔کپاس کی فصل کے نقصان کا اندیشہ۔ ۔تفصیل کے مطابقسکس آر کی شاخ ون ایل میں تقریبا 80فٹ چوڑا شگاف پڑنے سے نواحی گائوں 145سکس آر کا سینکڑوں ایکڑ رقبہ زیر آب آ گیا ہے کپاس کی فصل کو شدید نقصان پہنچنے کا اندیشہ متاثرہ زمینداروں کا کہنا ہے کہ محکمہ نہر کے افسران اور نہر سکس آر کے صدر بشیر خان کموکا سے ملی بھگت کر کے بڑے زمیندار نہر میں اضافی پائپ لگاتے ہیں اور نہر میں پانی کی مقدار کو بڑھا دیا جاتا ہے جس وجہ سے نہر کو شگاف پڑا نہر کی پٹڑی اتنی کمزور ہے کہ نہر کے ٹوٹنے کا ہر وقت خطرہ رہتا ہے انہوں نے کہا ہے کہ ہمارے زمینداروں کے اخراجات اتنے زیادہ ہیںاور نہر کے ٹوٹنے سے ہونے والا خسارہ ہم برداشت نہیں کر سکتے پہلے ہی چھ مرتبہ نہر میں پانی نا ہونے کی وجہ سے ہم محروم رہے اب نہر کے ٹوٹنے سے ہماری کپاس کی فصل کی تباہ ہو چکی ہے انہوں نے حکمرانوں سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ محکمہ انہار کے افسران کے خلاف قانونی کاروائی کریں اور ہمارے کپاس کے نقصان کا ہمیں معاوضہ دیا جائے ہم غریب کاشت کا ر اس تباہی کو برداشت نہیں کر سکتے اس موقع پر موجود نہر کے صدر بشیر خان کموکا کا کہنا ہے کہ چھ سات مربعہ اراضی زیر آ گئی ہے جس سے چند ایکڑ فصل کے تباہ ہونے کا امکان ہے زیادہ کھیتوں سے پانی نکال کر دوسر ے کھیتوں میں ڈال دیا گیا ہے انہوں نے کہاکہ نہر کے ٹوٹنے کے اصل حقائق تحقیقات کے بعد جلد سامنے آ جائیں گے

یہ بھی پڑھیں  ٹیکسلا:ماں اوربچے کی صحت کا دارومدار کنبہ کے سائز پر منحصر ہے، طارق محمود عزیز

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker