Download WordPress Themes, Happy Birthday Wishes
شہ سرخیاں
بنیادی صفحہ / تازہ ترین / حجرہ شاہ مقیم:واپڈا سرکل کرپشن،بدعنوانی اورصارفین سےزیادتیوں میں پنجاب میں تیسرےنمبرپر

حجرہ شاہ مقیم:واپڈا سرکل کرپشن،بدعنوانی اورصارفین سےزیادتیوں میں پنجاب میں تیسرےنمبرپر

حجرہ شاہ مقیم ( نامہ نگار)واپڈا سرکل حجرہ شاہ مقیم کرپشن،بدعنوانی اور صارفین سے زیادتیوں میں پنجاب بھرمیں تیسرے نمبر پر آ گیا،حجرہ شاہ مقیم و گرد و نواح کے لیسکو صارفین ملازمین کے ظلم کی چکی میں پس کر رہ گئے،کوئی شنوائی نہیں ہو رہی،آواز بلند کرنے والے صارفین پر دفاتر میں تشدد، وفاقی وزیر مملکت کا اظہار برہمی،وزیر اعظم اور چیف جسٹس پاکستان سے نوٹس لینے کا مطالبہ۔تفصیلا ت کے مطابق اسلام آباد میں اعلیٰ حکام کو ملنے والی رپورٹ کے مطابق واپڈا سرکل حجرہ شاہ مقیم کی حالت انتہائی خراب ہو چکی ہے ،کرپشن،صارفین سے زیادتیوں اور بد عنوانیوں میں پنجاب بھر میں تیسرے نمبر پر ہے جبکہ دیگر پوزیشنوں میں قصور اور چونیاں شامل ہیں،یہاں حجرہ شاہ مقیم میں صارفین کو اوور بلنگ،ڈی ٹیکشن اور بقایا جات کی مد میں بھاری رقم ڈال کر لائن لاسز پورے کئے جا رہے ہیں جبکہ گزشتہ ماہ کاشتکاروں کو پانچ سے پندرہ ہزار روپے تک کی اضافی رقم ڈال دی گئی اور اوپر سے آنے والے احکامات کا کہہ کر فائلیں تک سیل کر دی گئیں جس پر سینکڑوں کاشتکاروں نے بیوی بچوں کے ہمراہ واپڈا دفاتر کے سامنے شدید احتجا ج کیا،واپڈا ملازمین کی کرپشن دن دیہاڑے دیکھنے میں آرہی ہے چند ہزار لیکر لاکھوں روپے مالیت کی بجلی چوری چلواکر پوری قوم کو اندھیروں میں دھکیلا جا رہا ہے جبکہ ایک ذمہ دار آفیسر نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بتایا کہ آوے کا آوا ہی بگڑا ہوا ہے سب کو ٹھیک کرنا نا ممکن ہو چکا ہے ،قرب و جوار کے بعض گاؤں پورے کے پورے چوری کی بجلی سے چل رہے ہیں جنکے خلاف کاروائی ظاہر کر نے کی غرض سے صرف ایف آئی آر درج کرودی جاتی ہے ،صارفین نے بتایاکہ کہ بل درستگی سے لیکر گھریلو ،تھری فیس اور ٹیوب ویل کنکشن کی مد میں دس ہزار سے لیکر نوے ہزار روپے تک منہ مانگی رشوت لیکر غریبوں کی جیب کاٹی جا رہی ہے اور ان مظالم کے خلاف آواز بلند کرنے والوں کو واپڈا دفاتر میں تشدد کا نشانہ بنایا جاتا ہے اس امر کا اظہار اس تمام صورتحال سے تنگ آئے وفاقی وزیر مملکت سید صمصام علی بخاری نے نواحی گاؤں رحمت والا میں کھلی کچہری سے خطاب کر تے ہوئے کیا جہاں سب سے زیادہ شکایات واپڈا سے متعلقہ تھیں،انہوں نے اعتراف کرتے ہوئے کہا کہ ایکسیئن صاحب کو میں نے ہی یہاں لگوانے کا جرم کیا ہے اور اب اسکا خمیازہ بھگت رہے ہیں اور انکی سربراہی میں لیسکو ملازمین نے صارفین کو جینا حرام کر رکھا ہے لوگوں کی جیبوں پر ڈاکہ ڈالا جا رہا ہے اور آواز بلند کرنے والوں کو انکے دفاتر میں تشدد کا نشانہ بنا یا جا رہ ہے ،وفاقی وزیر مملکت نے کہا کہ واپڈا ملازمین اپنا قبلہ درست کرلیں ورنہ انکے خلاف کاروائی ہو گی،وفاقی وزیر مملکت کی اس برہمی کے باوجود صورتحال جوں کی توں ہے اور غریب صارفین کی بات کوئی سننے والا نہیں،علاقہ کی سیاسی ،سماجی اور تاجر تنظیموں اور سینکڑوں صارفین بجلی نے وزیر اعظم راجہ پرویز اشرف اور چیف جسٹس پاکستان افتخار چوہدری سے مطالبہ کیا ہے کہ حجرہ شاہ مقیم و گرد ونواح میں واپڈا کی اندھیر نگری کا نوٹس لیکر صارفین کے ناتواں کندھوں پر ڈالا جانے والا اضافی بوجھ کم کروائیں

یہ بھی پڑھیں  رینالہ خورد : غیرت کے نام پر ماموں نے جواں سال بھانجی کو قتل کردیا