پاکستانتازہ ترین

تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان نے5نکاتی ہیلتھ پالیسی پیش کردی

اسلام آباد(بیوروچیف) پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان نے 5نکاتی صحت پالیسی کااعلان کردیا جس کے مطابق صحت کے بنیادی مراکزمقامی حکومت کے ماتحت ہوں گے۔ پاکستان کے دارلحکومت اسلامآباد میں نیوز کانفرنس کے دوران عمران خان نے تحریک انصاف کی 5نکاتی پالیسی پیش کی ، پالیسی کے تحت متعدی اور غیر متعدی امراض کے بارے میں آ گاہی، سینی ٹیشن کا قومی پروگرام، اشیائے خوردونوش کے معیار کے لیے نیا قانون اور نئی ڈرگ پالیسی بنائی جائے گی۔
صحت کے شعبے کو با اختیار، تمام اضلاع میں ڈسٹرکٹ ہیلتھ بورڈز کا قیام جبکہ اسپتالوں کو ڈسٹرکٹ ہیلتھ بورڈ کے زیر انتظام کیا جائے گا۔ صحت کے شعبے میں افرادی قوت کی کمی پوری کی جائے گی۔ نرسنگ کونسل اور پاکستان میڈیکل اینڈ ڈینٹل کو غیر سیاسی بنانے کے اقدامات کئے جائیں گے۔ پرائمری ہیلتھ کیئر کے نظام کو مستحکم جبکہ دیہی اور بنیادی مراکز صحت میں جدید طبی سہولتیں فراہم کی جائیں گی۔ ملک کے ہیلتھ انفارمیشن سسٹم کو فعال کیاجائےگا جب کہ پاکستان کے نظام صحت میں اختیارات کی نچلی سطح تک منتقلی یقینی بنائی جائے گی اور ہیلتھ بجٹ میں 6گنا اضافہ کیا جائے گا۔
پریس کانفرنس کے دوران عمران خان نے کہا کہ ن لیگ کے قائدمیان نواز شریف نے شوکت خانم اسپتال کیلئے 50 کروڑ روپے دینے کا وعدہ کیا تھا مگر یہ کہہ کر رقم کہیں اور خرچ کر دی کہ اس اسپتال کی تعمیر ممکن نہیں۔
انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف جلد تعلیمی، زرعی اور صنعتی پالیسیاں بھی پیش کرے گی ۔ہماری جماعت میںمیں دیگرپارٹیوں کی طرح پیشہ ور سیاستدان نہیں ہیں جب کہ تحریک انصاف آئندہ سال اقتدار میں ہوگی۔
انہوں نے مزیدکہا کہ جس ملک کا صدر ہی مجرم ہوتو اس ملک میں انصاف کی فراہمی کیسے ممکن ہوسکتی ہے۔

یہ بھی پڑھیں  مصر: ٹرین اور سکول بس میں تصادم، بچوں سمیت کم از کم سات افرادہلاک

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker