پاکستانتازہ ترین

کراچی میں امن و امان کامسئلہ ایسا نہیں ہے ،ڈاکٹرعشرت العباد خان

ishratul e badکراچی (بیورو رپورٹ)گورنر سندھ ڈاکٹرعشرت العباد خان نے کہا ہے کہ کراچی میں امن و امان کامسئلہ ایسا نہیں ہے کہ جس میں فرقہ وارانہ یا لسانی بنیادوں پر یا سیاسی اکائیوں کے درمیان کسی بھی قسم کی مخاصمت جاری ہو،مٹھی بھر عناصر ہیں جو کسی اشارے پر شہرکے امن کو خراب کرنے کے لئے متحرک ہوتے ہیں انکی کوشش ہوتی ہے کہ ٹارگٹ کلنگ کے ذریعے فرقہ وارانہ، لسانی یا سیاسی بنیادوں پر شہر میں امن و امان کا مسئلہ پیدا کیا جائے ۔ گورنر سندھ نے کہا کہ شہریوں کے تعاون، سیاستدانوں، علماء کرام کی دانش مندی اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کی انتھک محنت سے شہر میں امن و امان کی صورتحال بہتر ہے کاروباری سرگرمیاں بھی جاری ہیں جس سے روزگار کے مواقع پیدا ہورہے ہیں اس کے ساتھ ساتھ ترقیاتی کام بھی تیزی سے جاری ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اگر ان تمام چیزوں کا موازنہ کیا جائے تو یہ بات واضح طور پر کہی جاسکتی ہے کہ شہر کے امیج کو دانستگی یا غیر دانستگی میں بُرا بنا کر پیش کیا جارہا ہے جب کہ زمینی حقائق پیش کردہ امیج کے برعکس ہیں ان حقائق کو نہ صرف شہر کے رہنے والے بلکہ باہر سے آنے والے ملکی و غیر ملکی بھی یہ تسلیم کرتے ہیں۔ یہ بات انہوں نے سندھ تاجر اتحاد کے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کہی جوچیئرمین جمیل پراچہ کی قیادت میں گورنر سندھ سے ملاقات کے لئے گورنر ہاؤس آیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ تاجر جس طرح اپنی مصنوعات کی تشہیر کرتے ہیں اسی طرح سے شہر کے تجارت دوست ماحول کی تشہیر بھی کرنی چاہئے اگر وہ عوام تک یہ پیغام پہنچانے میں کامیاب ہوتے ہیں کہ شہر اتنا ہی پرسکون ہے جتنا پاکستان کا کوئی اور شہر یا دنیا کا کوئی ایسا شہر کہ جس کی آبادی سوا دو کروڑ سے زائد ہو تو عوام کے حوصلے اور اعتماد میں اضافہ ہوگا اور وہ لوگ جو شہر کے بدخواہ ہیں اور شہر کے بارے میں منفی تاثر پھیلاتے ہیں انہیں ناکامی کا منہ دیکھنا پڑے گا انہو ں نے کہا کہ جتنی صلاحیت اور استعداد اس شہر میں ہے اتنی پاکستان کے کسی اور شہر میں نہیں ہے۔ یہ شہر آج بھی دنیا کا سستا ترین شہر ہے اور اپنی آغوش میں کروڑوں لوگوں کو سمائے ہوئے ہے۔ گورنر سندھ نے کہا کہ کراچی میں سیکیورٹی کو قائم رکھنا حکومت سمیت سب کی ذمہ داری ہے اگر عوام ایسے لوگوں کی نشاندہی کریں جو مشکوک سرگرمیوں میں ملوث ہیں تو قانون نافذ کرنے والے اداروں کے لئے کاروائی کرنا آسان ہو جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ تاجروں کو تحفظ فراہم کرنے کے لئے حکومت نے جو اقدامات اٹھائے ان کے مثبت نتائج برآمد ہوئے اور تاجر برادری نے بھی اس کا برملا اعتراف کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اب قانون نافذ کرنے والے اداروں کا بھی اس پر فوکس ہے اور وہ تمام تر معلومات کے ساتھ جرائم پیشہ عناصر کے خلاف بھرپور کاروائیاں کررہے ہیں انہو نے تاجروں کو یقین دلایا کہ وہ وقت دور نہیں جب ہم شہر کو جرائم سے پاک کردیں گے۔

یہ بھی پڑھیں  رواں سال ایک لاکھ 43 ہزارپاکستانی حج کرینگے

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker