آر ایس مصطفیٰتازہ ترینکالم

اسلام کا قلعہ پاکستان اور روہنگیا مسلمان

sajeel mustafaپاکستان جو کہ خالصتاایک کلمہ کی بنیاد پر معرض وجود میں آیا اور جسے اسلام کا قلعہ تصور کیا جاتا ہے آج اس ملک کے وزیراعظم نے روہنگیا مسلمانوں کی حالت زار پر امداد کیلئے کمیٹی بنادی ہے۔یہ خبر پڑھ کر دل کو ایک جھٹکا سا لگا کہ اسلام کا قلعہ صرف امداد کی حد تک ہی جائے گا ؟آج پاکستان پر فرض ہے کہ وہ آگے بڑھ کر اپنے مسلمان بھائیوں کی مدد کو پہنچے تاکہ دنیا کو معلوم ہو سکے کہ مسلمان ایک جسم کی مانند ہے درد کسی حصے میں بھی ہو تو درد سارا جسم محسوس کرتا ہے اور معلوم ہو سکے کہ دنیا میں مسلمان جہاں کہیں بستے ہو ان کا دل ایک ساتھ دھڑکتا ہے۔پاکستان نے اس معاملے کو سلامتی کونسل میں اٹھانے کا فیصلہ کیا ہے اس کے علاوہ اسلامی ممالک کی تنظیم جس میں مسلمان ممالک شامل ہیں اس تنظیم کی اس معاملے پر خاموشی باعث تشویش ہیاور روہنگیا مسلمانوں کی مدد کرنے میں ناکام نظر آتی ہے نہ تو یہ تنظیم برما حکومت پر کوئی دباؤ ڈالنے میں کامیاب ہوئی ہے اور نہ کوئی مسلم ملک ان دکھیارے روہنگیا مسلمانوں کو اپنانے کو راضی ہے ایسے میں پاکستان کو اپنا ہاتھ بڑھانا چاہیے اور ان کو اپنانا چاہیے ۔روہنگیا مسلمان کئی عرصوں سے مہاجر کیمپوں میں مقیم ہیں اور کی نقل و حرکت،تعلیم اور شادیوں پر سخت پابندیاں عائد ہیں
اقوام متحدہ ان کے ساتھ روا رکھے جانے والے غیر انسانی سلوک کے حاتمے کے لیئے کوششیں کر چکی ہے اور حال ہی میں امریکہ کی طرف سے ظلم و ستم روکنے کیلئے بھئی مطالبہ آچکا مگر ظلم و ستم روہنگیا مسلمانوں پر جاری ہیں۔مسلمان عورتوں کی صمت دری ،بچوں پر ظلم کیانتہا کردی گئی ۔ بدھ مت جوکہ ایک امن پسند مذہب ہونے کا دعویدار ہے اس کی مسلمانوں سے نفرت کی یہ کھلی داستان ہے۔کاش کوئی طارق بن ذیاد آئے جو ان مظلوموں کی عصمت کے تقدس کے لیے کشتیاں جلا کر میدان کارزار میں کود پڑے۔کاش کہ کوئی محمد بن قاسم ہو جو ایک مسلمان لڑکی کے خط پر اس کی عزت بچانے نکل کھڑا ہوا کیونکہ آج مسلمانوں کو ایک محمد بن قاسم ،طارق بن ذیاد جیسے کردار کی ضرورت ہے۔تمام اسلامی ممالک کے سربراہان کل میدان حشر میں کیا منہ دکھائے گے جب سوال ہوگا کہ کہاں تھے جب یہودونصار مسلمانوں پر فلسطین ،کشمیر اور برما میں ظلم و ستم کے پہاڑ توڑ رہے تھے۔اے کاش تمام مسلمان ایک ہو جائیں پھر کوئی مسلمانوں کی طرف غلط نظر سے نہ دیکھ سکے گا۔آج پاکستان کو اسلام کا قلعہ ہونے کا ثبوت دینا پڑے گااور پاکستان کو چاہیے کہ روہنگیا مسلمانوں کے لیے دنیا کے ہر ایک فورم پہ آواز اٹھائے اور مسلمانوں کا دفاع اتنے ولولے سے کر ے کہ دنیا دیکھے کہ پاکستان ہی اسلام کا قلعہ ہے اور پاکستان نے اس کو سچ کر دکھایا ہے کہ جہاں جہاں مسلمان مشکل میں ہونگے پاکستان ان کی ہر ممکن مدد کو پہنچے گا ۔پاکستان کو چاہیے کہ روہنگیا مسلمانوں کی مدد کے لیے جلدازجلد اقدامات کرے جیسا کہ ترکی نے اپنے مسلمان بھائیوں کی طرف ہاتھ بڑھایا ہے اس پر ترک حکومت اور طیب اردگان کے اقدامات قابل ستائش ہیں۔اب پاکستان حکومت بھی انشااللہ ایسے اقدامات اٹھانے جارہی ہے جس سے پاکستان حقیقت میں اسلام کا قلعہ ثابت ہوگااب پاکستان روہنگیا مسلمانوں کی آباد کاری کا بھی سوچ رہا ہے ۔اللہ تمام مسلمانوں میں اتحاد پیدا کرے اور پاکستان کو مضبوط ریاست بنائے جو تمام امت مسلمہ کی قیادت کرسکے اور پاکستان حقیقی معنوں میں اسلام کا قلعہ ثابت ہو۔

یہ بھی پڑھیں  حکمران کہاں ہیں؟؟

note

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker