پاکستان

اسلام آباد: حلف نامہ پر دستخط نہ کرنے کی پاداش میں برطرف کیا گیا۔ نعیم خان لودھی

اسلام آباد: پاکستانی حکومت کی جانب سے برطرف کئے جانے والے سیکریٹری دفاع جنرل ریٹائرڈ نعیم خالد لودھی نے کہا ہے کہ انہیں حکومتی حلف نامے پر دستخط نہ کرنے کی پاداش میں برطرف کیا گیا ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے پاکستان کے نجی ٹیلی ویژن سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ خالد لودھی نے کہاکہ میرے سامنے ایک حلف نامہ رکھا گیا تھا جو حکومت کی جانب سے خاص طور پر لکھا گیا تھا کہ میمو کاغذ کا ٹکڑا ہے اس کی کوئی حیثیت نہیں۔

یہ بھی پڑھیں  میگا کرپشن مقدمات کو منطقی انجام تک پہنچانا اولین ترجیح ہے، چیئرمین نیب

سابق سیکریٹری دفاع کا کہنا ہے کہ انہوں نے حکومت سے کہا کہ یہ قانونی نکتہ ہے، ایسی اسٹیٹمنٹ جو میری نہیں اس پر میں کیسے دستخط کرسکتا ہوں۔

یہ بھی پڑھیں  وزیراعظم نے چیف الیکشن کمشنر کیلئے جسٹس (ر) نسیم اسکندر کا نام تجویز کردیا

انہوں نے کہا کہ مجھ سے سپریم کورٹ نے جو پوچھا اس کا جواب دیا تھا، اس پر وزیر دفاع نے وضاحت مانگی لیکن تحقیقات اور شوکاز نوٹس جاری کئے بغیر ہی مجھے برطرف کردیا گیا جب کہ وزیر اعظم نے بھی برطرفی کی وجہ نہیں بتائی۔

یہ بھی پڑھیں  سندھ بھر میں بلدیاتی انتخابات کیلئےکاغذات نامزدگی فارمز آج سے جمع ہوں گے

ان کا مزید کہنا تھا کہ حکومت نے غلطی کا احساس ہونے پر برطرف کیا جب کہ وزیر اعظم کی جانب سے لگائے جانے والے الزامات کہ میری وجہ سے غلط فہمیاں پیدا ہورہی ہیں وہ بھی ثابت نہیں ہوسکتا۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker