پاکستان

سینیٹ کےانتخابات میں پیپلز پارٹی نے اٹھارہ، مسلم لیگ ن نے سات سیٹیں جیت لیں

اسلام آباد(ڈیسک رپورٹر) پیپلز پارٹی نے اٹھارہ سینیٹرز کی کامیاب کے ساتھ میدان مار لیا، دوسرا نمبر مسلم لیگ ن اور اے این پی کا نمبر رہا۔ دونوں جماعتوں کے سات سات سینٹرز ایوان بالا پہنچ گئے ۔۔ ایم کیو ایم اور ق لیگ کے چار ، چار اور جے یو آئی کے تین سینیٹرز منتخب ہوئے۔ سینیٹ کی چون میں سے پینتالیس نشستوں پر ووٹنگ ہوئی ۔۔ اور نو سینیٹرز بلا مقابلہ منتخب ہوگئے۔ پیپلز پارٹی ایوان بالا کی 18 نشستوں پر اپنے سینیٹرز منتخب کرا کر پہلے نمبر پر رہی جبکہ مسلم لیگ ن کے 7 سینیٹرز منتخب ہوئےاس طرح اس کا دوسرا نمبر رہا۔ عوامی نیشنل پارٹی کے 7 سینیٹرز ایوان بالا میں پہنچنے میں کامیاب رہے، متحدہ قومی موومنٹ کے چار سینیٹرز منتخب ہوئے، مسلم لیگ ق کے چار سینیٹرز کامیاب قرار پائے، جمعیت علمائے اسلام کے تین سینیٹرز ایوان بالا پہنچ گئے۔ بلوچستان نیشنل پارٹی کے بھی دو سینیٹرز کامیاب قرار پائے، مسلم لیگ فنکشنل کا ایک سینیٹر کامیاب رہا اور 5 آزاد امیدوار بھی سینیٹ پہنچنے میں کامیاب رہے۔ ایوان بالا میں پیپلز پارٹی 41 نشستوں کے ساتھ سرفہرست، نو سینیٹرز ریٹائرمنٹ سے قبل ہی اگلی ٹرم کیلئے دوبارہ منتخب ہو گئے۔ ذرائع کے مطابق، انتخابات کے بعد، سینٹ میں پیپلز پارٹی کی 41، مسلم لیگ نون کی 14، مسلم لیگ ق کی 5، اے این پی کی  12، ایم کیو ایم اور جمعیت علماء اسلام کی سات سات ، مسلم لیگ فنکشنل اور نیشنل پارٹی کی ایک ایک، بی این پی عوامی کی چار سیٹیں ہیں۔ جبکہ ایوان بالا میں 12 آزاد ارکان شامل ہوں گے۔ نو سینٹرز ریٹائرمنٹ سے قبل ہی اگلی ٹرم کے لئے دوبارہ منتخب ہو گئے ہیں۔ دوبارہ منتخب ہونے والوں میں رضا ربانی، طلحہ محمود، طاہر مشہدی، اسرار اللہ زہری، اسحق ڈار، بابر اعوان،حفیظ شیخ ،صالح شاہ اور الیاس بلور شامل ہیں۔

یہ بھی پڑھیں  عدالت نے جہانگیر ترین کو گرفتار کرنے سے روک دیا

سندھ میں نتائج کےاعلان کے ساتھ ہی پیپلز پارٹی اور ایم کیو ایم کے ارکان سندھ اسمبلی اور پارٹی کے حامی اسمبلی ہال کے باہر جمع ہو گئے۔ اپنی پارٹی کے امیدواروں کی کامیابی پر خوب جشن منایا۔ پارٹی کارکنوں نے نعرے لگائے اور والہانہ رقص کیا۔ پنجاب اسمبلی کے باہرپیپلز پارٹی کے حامیوں نے اپنے امیدواروں کی کامیابی پر ڈھول کی تھاپ پر بھنگڑے ڈالے۔ جس میں خواتین بھی پیش پیش تھیں۔ زندہ ہے بی بی زندہ اور جئے بھٹو کے نعرے لگائے۔ ایک طرف جئے بھٹو تو دوسری جانب ن لیگ کے امیدواروں کی کامیابی پر نواز شریف کے حق میں نعرے لگائے گئے۔ ن لیگ کے رہ نما سردار ذوالفقار علی خان کھوسہ کے پنجاب سے سینیٹر منتخب ہونے پر ان کے آبائی علاقہ ڈیرہ غازی خان میں کارکنوں نے مٹھائیاں تقسیم کیں، ڈھول کی تھاپ پر بھنگڑے ڈالے اور آتش بازی کا مظاہرہ کیا۔

یہ بھی پڑھیں  لیڈرکواخلاق کا دامن نہیں چھوڑنا چاہیے‘ سرکس لگانے والے عوام کوبے وقف نہیں بناسکتے نوازشریف

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker